دھوپ چھاوں (چراغ حسن حسرت)

مسافروں سے بھری ہوئی لاری شور مچاتی کچی سڑک پر بڑھتی چلی جا رہی تھی۔ ہوا میں خنکی تھی فضا میں اکتاہٹ ہمارے داہنے ہاتھ بھوری لال پیلی چٹانیں چپ کھڑی تھیں۔ بائیں ہاتھ ایک برساتی نالہ پتھروں سے سر پٹکتا دھیمے سروں میں ایک اداس گیت گاتا بہہ رہا تھا۔ ان سے ذرا ہٹ مزید پڑھیں

اگر چنگیز خان زندہ ہوتا(از قلم: چراغ حسن حسرت)

اگر وہ ہندوستان اور پاکستان میں پیدا ہوتا تو کسی خانہ بدوش قبیلے کا سردار ہوتا نہ کسی علاقے کا حاکم بلکہ یہ تو لیڈر ہوتا یا پھر شاعر ہوتا۔ لیڈر ہوتا تو سیاست کے گلے پر کند چھری پھیرتا۔ اخبارنویس کی ٹانگ اس طرح توڑتا کہ بچاری ہمیشہ کے لیے لنگڑی ہو کر رہ مزید پڑھیں

چراغ حسن حسرت کی منتخب شاعری

چراغ حسن حسرت کے برسی کے موقع پر صرف اردو ڈاٹ کام کی طرف سے خراج تحسین کے طور پر منٹو کا لکھا خاکہ، حسرت کی شاعری اور مزاح نگاری کے حوالہ سے ان کا ایک مضمون آج خصوصی طور پر شامل اشاعت کیا گیا ہے۔ غزل یارب غم ہجراں میں اتنا تو کیا ہوتا مزید پڑھیں

چراغ حسن حسرت (خاکہ) از سعادت حسن منٹو

مولانا چراغ حسن حسرت جنہیں اپنی اختصار پسندی کی وجہ سے حسرت صاحب کہتا ہوں۔ عجیب و غریب شخصیت کے مالک ہیں۔ آپ پنجابی محاورے کے مطابق دودھ دیتے ہیں مگر مینگنیاں ڈال کر۔ ویسے یہ دودھ پلانے والے جانوروں کی قبیل سے نہیں ہیں حالانکہ کافی بڑے کان رکھتے ہیں۔ آپ سے میری پہلی مزید پڑھیں

مزاح نگار و شاعر چراغ حسن حسرت کی 64 ویں برسی ہے

لاہور(طاہر گورداسپوری) چراغ حسن حسرت اردو کے ممتاز مزاح نگار، شاعر، ادیب اور صحافی تھے۔ 1904ء میں بمیار ضلع پونچھ (کشمیر) میں پیدا ہوئے۔ حصول تعلیم کے بعد انہوں نے کلکتہ میں اخبار نویسی کا کام شروع کیا اور اخبار (نئی دنیا) کے ذریعہ ایک مزاح نگار کی حیثیت سے مشہور ہوئے۔ اس کے بعد مزید پڑھیں

خوجی (چراغ حسن حسرت)

لیجیے ان سے ملیے ان کا نام خوجی ہے وطن لکھنو پیشہ امیرو ں کی مصاحبت چھوٹے چھوٹے ہاتھ پاؤں چھوٹا سا قد، کالی کالی رنگت گلیور صاحب کے سفر نامے میں آپ نے بونوں کی بستی کا حال پڑھا ہو گا۔ میاں خوجی کو دیکھ کے بے اختیار بونے یاد آ جاتے ہیں۔ خوجی مزید پڑھیں

مانگے تانگے کی چیزیں(طنز و مزاح)

پچھلے دنوں ایک پرانے رسالے کی ورق گردانی کر رہا تھا کہ مانگے تانگے کی چیزوں کے متعلق ایک مضمون نظر آیا۔ اصل مضمون تو بیری پین کا ہے اردو میں کسی صاحب نے اس کا چربا اتارا ہے۔ ماحصل یہ کہ مانگے تانگے کی چیزیں برتنا گناہ ہے۔ جیب میں زور ہے تو جس مزید پڑھیں

کراچی اور لاہور

لاہور کا ایک جغرافیہ پطرس تحریر کر گئے اور دوسرا حسرت نے لکھا شکر ہے کہ آج دونوں نہیں ہیں، ورنہ حسرت نے کراچی کا جو حسن بیان کیا ہے جیسے ہی کراچی کی بدصورتی دیکھتے تو ان کا انتقال ہو جاتا، اور پطرس کو بہت خوشی اس بات پر ہوتی کہ کراچی میں شاعر مزید پڑھیں