ایک بُدھو(افسانہ) انتون چیخوف

انگلش سے اردو ترجمہ: عقیلہ منصور جدون کچھ دن قبل میں نے اپنے بچوں کی گورنس جولیا ویسلوینہ کو اپنی سٹڈی میں بلایا ۔”بیٹھ جاؤ جولیا ویسلوینہ !‘‘ میں نے کہا۔ ’’آؤ ہم آپس میں حساب کتاب کر لیں،اگرچہ تمھیں پیسوں کی سخت ضرورت ہے لیکن تم تکلفن کو ئی تقاضہ نہیں کرو گی۔۔ ہمارے مزید پڑھیں

انتخاب کیا ہے ؟ کیدو یا رانجھا ۔۔۔۔؟

پاکستان اپنے قریبی ممالک میں جمہوریت ،جمہوریت کھیلنے والا شاید پہلا ملک ہے اور اس اعتبار سے بھی کہ یہاں جمہوریت صرف ایک کھیل، شغل اور نعرہ ہے، جبکہ ذہنیت آمرانہ اور سرمایہ دارانہ و جاگیردارانہ ہے جس میں مافیانہ تڑکہ بھی لگ چکا ہے اورانداز حکمرانی جمہوری سے زیادہ آمرانہ ہے۔ پاکستان کی تاریخ مزید پڑھیں

بکل دے وچ چور، ایثار رانا

کبھی کبھی بات کا کہہ جانا بہت اوکھا ہوتا ہے لیکن مسئلہ سمجھ آجائے تو معاملہ سوکھا ہوتا ہے۔ وزیراعظم اگر منجھی تھلے ڈانگ پھیر لیتے یا بکل میں چھپے چوروں کے کان پکڑ لیتے تو انہیں سابق نیلسن منڈیلا جونیئر کی رپورٹیں دیکھ کر حیرانی ہوتی اور انہیں ہشاش بشاش جہاز میں، میں اڈی مزید پڑھیں

پانچ ہزارروپے – تحریر: ڈاکٹر شاکرہ نندنی

جب اُس کی پیدائش ہوئی تو پورے گھر میں اُس ہی کی معصوم کلکاریاں گونج رہیں تھیں، ہر کوئی اسے گود میں اٹھائے یہاں سے وہاں لے جارہا تھا۔ بہنیں اس کی بلائیں لے رہی تھیں اور بھائی اس کے سر پر ہاتھ پھیر رہے تھے۔ کہنے کا مطلب یہ ہے کہ اسے پیدا ہوتے مزید پڑھیں

قِسطوں کا مسیحا – تحریر: ڈاکٹر شاکرہ نندنی

کافی تگ ودو کے بات ڈاکٹراپنے مریض کو قائل کر پایا کہ یہ آپریشن کرنا اس کے لئے کتنا ضروری ہے. لیکن جیسے ہی اس نے کل خرچ 6 لاکھ بتایا مریض نے پھر منع کر دیا. تب ڈاکٹر نے سمجھاتے ہوئے کہا ” دیکھو تمہیں میں سہولت دوں گا کہ آپریشن سے پہلے 2 مزید پڑھیں

’’پاکستان بنانے کا گناہ‘‘ اور مولانا مفتی محمودؒ

مولانا علامہ زاہدالراشدی صاحب موجودہ کالم علامہ زاہد الراشدی صاحب کا یہ کالم آج سے بیس برس پہلے اوصاف اخبار میں شائع ہوا تھا ایک قاری نے دوبارہ اشاعت کے ارسال کیا ہے۔ مولانا زاہد الراشدی عالم اسلام کے ایک بلند پایا عالم اور بزرگ شخصیت کے طور پر اپنی ایک الگ شناخت رکھتے ہیں۔ مزید پڑھیں

بجُوکا – تحریر: ڈاکٹر شاکرہ نندنی

وہ ایک بجُوکا تھا اور بجُوکا کے آنسو بھلا کون دیکھتا ہے۔ وہ بھری دنیا میں بازو پھیلائے کھڑاتھا، اتنا تنہا تھا کہ وہ اب کسی کو بھی تنہا نہیں دیکھ سکتا تھا سو جب وہ آئی اور اُس کو کوئی کندھا نہ مِلا تو بجُوکا  نے اپنا  کندھا آگے کیا اور کہا یہاں تم مزید پڑھیں