گولان ہائیٹس اسرائیل کی ملکیت کا امریکی اعلان اقوام متحدہ کے موقف کی نفی ،خلیج،تعاون کونسل

Spread the love

دبئی(مانیٹرنگ ڈیسک ) خلیج تعاون کونسل نے امریکی صدر ٹرمپ کی جانب

سے گولان کی پہاڑیوں پر اسرائیل کے ناجائز قبضے کو تسلیم کرنیکی مذ مت

کرتے ہوئے کہا ہے گولان ہائیٹس شام کا متنازع حصہ ہے، ٹرمپ کے موقف سے

حقیقت تبدیل نہیں ہوگی، جی سی سی گولان ہائیٹس کو بلا شبہ شام کا حصہ

سمجھتی ہے۔تفصیلات کے مطابق امریکی صدر ڈونلڈ ٹرمپ نے ایک مرتبہ پھر

مشرق وسطی میں موجود ناجائز صیہونی ریا ست اسرائیل سے اپنی دوستی ثابت

کرتے ہوئے شام کی گولان ہائیٹس پر اسرائیلی قبضے کو مکمل طور پر تسلیم کیا

تھا۔خلیج تعاون کونسل کے سیکر یٹر ی جنرل عبداللطیف بن راشد الزیانی نے

ڈونلڈ ٹرمپ کے بیان پر افسوس کا اظہار کرتے ہوئے گولان ہائیٹس پر اسرائیلی

خود مختاری تسلیم کرنے کو حقائق کے منافی قرار دیا اورکہا ٹرمپ کے موقف

سے حقیقت تبدیل نہیں ہوگی، جی سی سی گولان ہائیٹس کو بلا شبہ شام کا حصہ

سمجھتی ہے۔اقوام متحدہ نے گولان کی پہاڑیوں کو متنازعہ علاقہ قرار دیا تھا اور

جی سی سی یو این کے موقف کی حمایت کرتا اور اسے شام کا مقبوضہ علاقہ

سمجھتا ہے جس پر ناجائز ریاست اسرائیل نے جون 1967 میں قبضہ کیا تھا۔



Leave a Reply