ایسا افغانستان چاہتے ہیں جو کسی کیلئے خطرہ نہ ہو، زلمے خلیل زاد

Spread the love

واشنگٹن(مانیٹرنگ ڈیسک ) امریکی نمائندہ خصوصی برائے افغان مفاہمتی عمل

زلمے خلیل زاد نے کہا ہے ہم ایسا فغانستان چاہتے ہیں جو کسی کیلئے خطرہ نہ

ہو، سماجی رابطوں کی ویب سائٹ ٹوئٹر پر امریکی نمائندہ خصوصی نے اپنے

پیغام میں کہا ہم افغانستان کی خودمختاری کی عزت کرتے ہیں اور تمام افغانوں

کیلئے امن چاہتے ہیں۔ذرائع کا کہنا ہے امریکی صدر ڈونلڈ ٹرمپ کی بیٹی ایونکا

ٹرمپ نے بھی زلمے خلیل زاد سے ملا قا ت کی اور افغان مفاہمتی عمل میں

خواتین کے شمولیت کی اہمیت پر زوردیا ہے۔افغان میڈیا نے بھی مذکورہ بالا

ملاقات کی خبر ذرائع کے حوا لے سے دی ہے تاہم کسی سرکاری ذرائع سے

ایونکا ٹرمپ اور زلمے خلیل کی ملاقات کی تصدیق یا تردید سامنے نہیں آئی۔

افغانستان میں امن کے قیام کیلئے امریکہ، قطر اور پاکستان سمیت کئی ممالک کی

جانب سے مسلسل کوششیں کی جارہی ہیں، امریکی صدرڈونلڈٹرمپ کی جانب سے

پاکستان کو امن عمل میں کردار اداکرنے کی درخواست کے بعد اس عمل میں

تیزی آئی ہے۔دو ہفتے قبل 12مارچ کو قطر میں امریکہ اور طا لبان امن مذاکرات

کا پانچواں دور ہوا تھا جس میں امریکی انخلا کے بارے میں دستاویزات تیار کی

گئی ہیں۔ معاہدے کی دستاویزات انگر یز ی اور افغانستان کی مقامی زبان میں

لکھی گئی ہیں تاہم کسی فریق نے فی الحال معاہدے پر دستخط نہیں کیے۔

امن کیلئے پاکستانی اقدامات قابل ستائش،مزید اقدام کی ضرورت،زلمے خلیل زاد

Please follow and like us:

Leave a Reply