31

عمران خان کے عقاب خطرے کا سبب بن رہے تھے، اﷲ نے اچھی صورتحال پیدا کر دی , مفتی منیب الرحمن

Spread the love

عمران خان کے عقاب

لاہور (صرف اردو آن لائن نیوز) حکومت اور کالعدم تحریک لبیک پاکستان (ٹی ایل پی) کے درمیان ثالثی کا کردار ادا کرنیوالے سابق چیئر مین رویت ہلال کمیٹی مفتی منیب الرحمن نے نجی ٹی وی کے پروگرام نقطہ نظرمیں میزبان سینئر صحافی مجیب الرحمن شامی اور عمیر بشیر سے گفتگو کرتے ہوئے کہاکہ میرا کوئی سیاسی مشن نہیں۔

کالعدم ٹی ایل پی کے مظاہرین میں کسی کے پاس کلاشنکوف نہیں تھی، معاہدے کی تکمیل تک قدم بہ قدم ساتھ رہیں گے، رٹ آف دی گورنمنٹ کی داستانیں سنانے والوں کوکہتا ہوں حکمت سے کام لیا جاتا ہے۔انہوں نے کہا کہ وزیراعظم کا بھی دانش پرمبنی فیصلے پرشکرگزارہوں۔

عمران خان کے عقاب خطرے کا سبب بن رہے تھے، اﷲ نے اچھی صورتحال پیدا کر دی، یقین دلاتا ہوں آنے والے دن اچھے ہونگے، ہمارا کوئی سیاسی ایجنڈا نہیں، مظاہرین دہشت گرد نہیں ملک کے وفادارہیں، کالعدم ٹی ایل پی کے خلاف الزام اورفتوے لگانا درست نہیں۔

مفتی منیب الرحمن کا کہنا تھا کہ کالعدم ٹی ایل پی کے جوانوں کوآمادہ کرنا کوئی آسان کام نہیں تھا۔ سب اچھی باتیں منوالی گئی ہیں۔ اﷲ نے وطن عزیزکوخون خرابے سے بچالیا، حق بات کے پلڑے میں وزن ڈالنے والوں کا بھی شکرگزارہوں، لبرل دوستوں کو دکھ اورپریشانی ہے،

لبرل دوست چند دن کرب کے برداشت کرلیں۔انہوں نے مزید کہا کہ جب کوئی ٹکراؤ ہوتا ہے تو دونوں اطراف سے نقصان ہوتا ہے، پولیس اہلکاروں کے لیے بھی دعاگوہوں۔

پروگرام کے دوران سوال پوچھا گیا کہ پاکستان تحریک انصاف (پی ٹی آئی) اور کالعدم تحریک لبیک پاکستان (ٹی ایل پی) کے درمیان الائنس کی باتیں چل رہی ہیں تو اس پر جواب دیتے ہوئے مفتی الرحمان کا کہنا تھا کہ الیکشن الائنس کی باتیں کرنے والے اور کالعدم ٹی ایل پی جانیں، یہ میرے ایجنڈے کا حصہ نہیں ہے،

میرے ایجنڈے کا حصہ امن، سلامتی ہے۔میزبان کی طرف سے سوال پوچھا گیا کہ کالعدم تحریک لبیک پاکستان کے سربراہ سعد رضوی کب تک رہا ہو جائیں گے اس پر جواب دیتے ہوئے مفتی منیب الرحمان نے کہا کہ مجھے امید ہے دس سے بارہ دن تک سارا پراسس مکمل ہوجائے گا۔

عمران خان کے عقاب


ڈاکٹر وحید قریشی بطور محقق

قارئین : ہماری کاوش پسند آئے تو شیئر ، اپڈیٹ رہنے کیلئے فالو کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں