ترین گروپ کا ظہرانہ 46

پولیس پر حملہ آور ملزمان کی گرفتاری تک مذاکرات نہیں ہو نگے، فواد چوہدری

Spread the love

مذاکرات نہیں ہو نگے

اسلام آباد (صرف اردو آن لائن نیوز) کالعدم جماعت کے احتجاج کے بعد وزیراعظم عمران خان نے

قومی سلامتی کمیٹی کا اجلاس طلب کر لیا۔وفاقی وزیر اطلاعات فواد چودھری نے سماجی رابطے کی

ویب سائٹ ٹویٹر پر لکھا کہ کالعدم جماعت کی غیر قانونی سرگرمیوں سے پیدا ہونیوالی صورتحال

کے پیش نظر وزیر اعظم عمران خان نے آج قومی سلامتی کمیٹی کا اجلاس طلب کیا ہے۔ٹویٹر پر

انہوں نے لکھا کہ اس اجلاس میں قومی سلامتی سے متعلق دیگر امور بھی زیر غور آئیں گے۔ دریں

اثناوزیر اعظم عمران خا ن نے کہا ہے کہ نشری مواد ڈراموں، کارٹونز اور فلموں کا مقصد اپنے کلچر

اور تاریخ کے بارے میں نوجوان نسل کو آگاہی دینا ہونا چاہیئے۔ جمعرات کو وزیرِ اعظم عمران خان

کی زیرِ صدارت رحمتہ اللعالمین اتھارٹی پر پیش رفت کا جائزہ اجلاس ہوا جس میں وفاقی وزراء پیر

نور الحق قادری، شفقت محمود، ڈاکٹر انیس احمد، صاحبزادہ سلطان احمد علی اور پروفیسر اعجاز

اکرم نے شرکت کی ۔اجلاس کو رحمتہ اللعالمین اتھارٹی پر پیش رفت سے آگاہ کیا گیا۔بتایاگیاکہ اتھارٹی

کا آرڈینینس جاری ہو چکا،چھ ممبران پر مشتمل بورڈ کی صدارت وزیرِ اعظم خود کریں گے،بورڈ

ممبران میں مقامی اور بین الاقوامی سطح کے محققین شامل ہونگے۔ وزیر اعظم نے ہدایت کی کہ

ممبران کی تقرری میں میرٹ کا خاص خیال رکھا جائے،اسلامی خاندانی نظام اور اسکے معاشرے پر

مثبت اثرات پر بھی تحقیق ہونی چاہیے۔ بتایاگیاکہ اتھارٹی نوجوانوں کو بڑھتی ہوئی معاشرتی اور

اخلاقی برائیوں جیسے کہ منشیات کے استعمال سے روکنے میں بھی معاون ثابت ہوگی۔ وزیر اعظم

نے کہاکہ ملک کی بقاء اخلاقی اقدار کو مضبوط کرنے میں ہے،اخلاقی اقدار کی بہتری کیلئے نبی

کریم ؐ کی سیرت طیبہ رہنمائی کا بہترین ذریعہ ہے۔ وزیر اعظم نے کہا کہ رحمتہ اللعالمین اتھارٹی

اخلاقیات کی قومی سطح پر بہتری کیلئے کلیدی اہمیت کی حامل ہے۔ عمران خا ن نے کہاکہ اتھارٹی

سکول، کالج، یونیورسٹی، میڈیا اور بین الاقوامی سطح پر تحقیق کے ذریعے سیرت طیبہ کے پہلوؤں

کے عملی زندگی میں اطلاق کو یقینی بنانے میں معاون ثابت ہوگی، دوسری طرف وفاقی وزیر

اطلاعات چوہدری فواد حسین نے کہا ہے کہ جب تک کالعدم تنظیم سڑکیں خالی اور پولیس کو شہید کر

نے والے مجرموں کو حوالے نہیں کرتی کوئی مذاکرات نہیں ہونگے ۔ اپنے بیان میں وزیر اطلاعات

نے کہاکہ واضح کر چکے ہیں جب تک کالعدم جماعت کے لوگ سڑکیں خالی نہیں کرتے اور پولیس

کو شہید کرنیوالے مجرموں کو اداروں کے حوالے نہیں کیا جاتا کوئی مذاکرات نہیں ہو سکتے، محب

وطن لوگ اس احتجاج سے خود کو لاتعلق کریں اپنے گھروں کو لوٹ جائیں اور ریاست کیخلاف

دہشت گردی کا حصہ نہ بنیں فواد چودھری نے کہا ہے کہ کالعدم ٹی ایل پی کے ساتھ بھارتی گٹھ جوڑ

پاکستان کو غیر مستحکم کر رہا ہے۔ سماجی رابطے کی ویب سائٹ ٹوئٹر پر اپنے بیان میں وفاقی

وزیر اطلاعات فواد چودھری نے کہا پنجاب حکومت کو کالعدم جماعت اور بھارتی گٹھ جوڑ سے آگاہ

کردیا ہے۔ فوا د چوہدری نے کہاہے ملک کو آگے لے جانے کیلئے امن ضروری ہے، امن کے بغیر

ترقی ممکن نہیں،

مذاکرات نہیں ہو نگے

ڈاکٹر وحید قریشی بطور محقق

قارئین : ہماری کاوش پسند آئے تو شیئر ، اپڈیٹ رہنے کیلئے فالو کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں