غیر ملکی امداد اورقرضوں کی بھاری قیمت چکائی,عمران خان

Spread the love

وزیراعظم عمران خان نے کہا ہے کہ غیر ملکی امداد اور قرضوںکی بھارتی قیمت چکائی ہے لہٰذاپاکستان اب کرائے کی بندوق کے طورپر استعمال نہیں ہوگا ، قبضہ مافیا اور جرائم پیشہ سیاستدانوں کے خلاف کارروائی میں ریاستی ادارے آزاد ہیں، اربوں لوٹنے والے حکمران پہلی بار قانون کی گرفت میں آرہے ہیںجو کہ ایک اہم تبدیلی ہے۔غیر ملکی ٹی وی کو انٹرویومیں وزیراعظم نے کہا کہ پاکستان پر ہمیشہ یہ الزام رہا ہے کہ امریکہ کے ساتھ تعلقات یک طرفہ رہے، جب آپ دوسروں کی امداد اور قرضوں پر انحصار کرتے ہیں تو یہ مفت نہیں ہوتا، آپ کو اس کی قیمت چکانا پڑتی ہے اور پاکستان نے اس کی بھارتی قیمت چکائی ہے۔انہوںنے کہاکہ اب سے پاکستان کسی اور کیلئے نہیں لڑے گا، ہمیں کرائے کی بندوق کے طور پر استعمال نہیں کیا جاسکے گا، ہماری خارجہ پالیسی ایسی ہوگی جو پاکستانی عوام کے مفاد میں ہو۔وزیراعظم نے سوال اٹھایا کہ 3 سے 4 ہزار حقانی گروپ کے لوگ کیسے وجہ ہوسکتے ہیں جبکہ ڈیڑھ لاکھ نیٹو افواج اور 2 لاکھ سے زائد افغان فوجی 16 سال میں افغانستان جنگ نہیں جیت سکے۔اس سوال کے جواب میں کہ مسئلے کے حل میں پاکستان کیا کرسکتا ہے؟ وزیراعظم عمران خان نے کہا کہ پاکستان، افغانستان کے پڑوسی ممالک کے ساتھ مل کر طالبان، امریکہ اور افغان حکام کو بات چیت کی میز پر لانے کیلئے کام کرسکتا ہے تاکہ سیاسی مفاہمت ہوسکے

Please follow and like us:

Leave a Reply