کورونا تیسری لہر تشویشناک 42

کورونا کے وار جاری، مزید 66 افراد جاں بحق

Spread the love

کورونا کے وار جاری

لاہور ،اسلام آباد (صرف اردو آن لائن نیوز) ملک بھر میں کورونا وائرس سے مزید 66 افراد جاں بحق

ہو نے کے بعد اموات کی تعداد 27 ہزار 4 ہوگئی، مزید 3 ہزار 12 نئے کیسز رپورٹ ہوئے، پاکستان

میں کورونا کے تصدیق شدہ کیسز کی تعداد 12 لاکھ 15 ہزار 821 ہوگئی۔ جمعرات کو نیشنل کمانڈ اینڈ

آپریشن سینٹر کے تازہ ترین اعدادوشمار کے مطابق گذشتہ 24 گھنٹوں کے دوران 3 ہزار 12 نئے

کیسز رپورٹ ہوئے، پنجاب میں 4 لاکھ 18 ہزار 196، سندھ میں 4 لاکھ 47 ہزار 678، خیبر پختونخوا

میں ایک لاکھ 69 ہزار 972، بلوچستان میں 32 ہزار 671، گلگت بلتستان میں 10 ہزار 204، اسلام

آباد میں ایک لاکھ 3 ہزار 549 جبکہ آزاد کشمیر میں 33 ہزار 551 کیسز رپورٹ ہوئے۔ ملک بھر میں

اب تک ایک کروڑ 86 لاکھ 82 ہزار 730 افراد کے ٹیسٹ کئے گئے، گذشتہ 24 گھنٹوں کے دوران

56 ہزار 778 نئے ٹیسٹ کئے گئے، اب تک 11 لاکھ 12 ہزار 236 مریض صحتیاب ہوچکے ہیں

جبکہ 5 ہزار 39 مریضوں کی حالت تشویشناک ہے۔ پاکستان میں کورونا سے ایک دن میں 66 افراد

جاں بحق ہوئے جس کے بعد وائرس سے مرنے والوں کی تعداد 27 ہزار 4 ہوگئی۔ پنجاب میں 12 ہزار

319، سندھ میں 7 ہزار 210، خیبرپختونخوا میں 5 ہزار 329، اسلام آباد میں 893، بلوچستان میں

344، گلگت بلتستان میں 182 اور آزاد کشمیر میں 727 مریض جان سے ہاتھ دھو بیٹھے۔صوبائی

دارالحکومت میں کورونا وبا کی چوتھی لہر کی شدت برقرارموذی وائرس مزید 14 زندگیاں نگل گیا،

24 گھنٹوں کے دوران 676 نئے کیس رپورٹ ہوئے جبکہ شہر میں مثبت کیسز کی شرح 11 فیصد

ریکارڈ کی گئی۔سیکرٹری محکمہ پرائمری اینڈ سیکنڈری ہیلتھ کیئر کے مطابق پنجاب بھر میں کورونا

سے مزید 28 مریض جاں بحق ہوئے، اموات کی مجموعی تعداد 12 ہزار 317 ہو گئی، 24 گھنٹوں

کے دوران ایک ہزار 295 نئے کیس سامنے آئے، کورونا کیسز کی مجموعی تعداد 4 لاکھ 18 ہزار

197 ہو گئی ہے۔محکمہ صحت کے مطابق صوبہ بھر میں ایکٹیو کیسز کی تعداد 23 ہزار 701 ہے،

گزشتہ 24 گھنٹوں کے دوران 18 ہزار 399 ٹیسٹ کئے گئے، پنجاب بھر میں کورونا کے مثبت کیسز

کی شرح 7 فیصد ریکارڈ کی گئی۔صوبہ پنجاب کے دیگر شہروں سمیت صوبائی دارالحکومت میں

بھی کورونا وائرس کی وجہ سے دی جانے والی چھٹیاں ختم، 10 روز بعد تعلیمی ادارے پھر سے کھل

گئے، سکولوں میں 50 فیصد حاضری کے تحت تدریسی عمل کو جاری رکھا جائے گا، بغیر ماسک

سکول میں داخلے پر پابندی، سکول انتظامیہ عملے کا ویکسی نیشن سرٹیفکیٹ جمع کرانے کی ذمہ

دار ہوگی۔ایس او پیز کے مطابق 50 فیصد حاضری کے تحت طلبہ سکول و کالج آ سکیں گے جبکہ

ایک روز آنے والے طلبہ کو اگلے روز چھٹی ہوگی، اساتذہ 100 فیصد حاضری کے تحت روزانہ

سکول و کالج آئیں گے۔یاد رہے این سی او سی کی جانب سے تعلیمی اداروں کو 15 ستمبر تک بند

رکھنے کی ہدایت کی گئی تھی۔

کورونا کے وار جاری

ڈاکٹر وحید قریشی بطور محقق

قارئین : ہماری کاوش پسند آئے تو شیئر ، اپڈیٹ رہنے کیلئے فالو کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں