ramzad 38

اشیائے خورونوش کی قیمتوں میں 15 سے 35 روپے فی کلو اضافہ

Spread the love

اشیائے خورونوش کی

لاہور(صرف اردو آن لائن نیوز) اشیائے خورونوش کی قیمتوں میں 15 سے 35 روپے فی کلو اضافہ کردیا گیا دالیں، بیسن ،سفید اور کالے چنے بھی مہنگے کر دیئے گئے۔دودھ کی قیمت 20 روپے فی لیٹر بڑھادی گئی ۔ضلعی انتظامیہ نے 13 اشیائے خوردنوش کی قیمتوں کا تعین کر دیا۔

ڈپٹی کمشنر عمر شیر چٹھہ نے احکامات جاری کر دیئے۔ ڈپٹی کمشنر لاہور عمر شیر چٹھہ نے باقاعدہ نوٹیفکیشن جاری کر دیا ۔ اس حوالے سے ڈپٹی کمشنر کا کہنا ہے کہ احکامات ذخیرہ اندوزی اور منافع خوری ایکٹ 1977 کے تحت کئے گئے۔ڈپٹی کمشنر لاہور کے جاری کردہ مراسلہ کے مطابق 20 کلو آٹے کے تھیلے کی قیمت حکومتی پالیسی کے مطابق طے کی جائے گی۔

چاول سپر کی قیمت فی کلو 120روپے طے کی گئی۔ دال چنا کی قیمت فی کلو 112 روپے سے بڑھا کر 130 روپے مقرر کی گئی۔ دال سپیشل کی قیمت فی کلو 130 روپے سے بڑھا کر 140 روپے مقرر، دال مسور کی قیمت فی کلو 170 روپے سے بڑھا کر 190 روپے مقرر،

دال ماش کی قیمت فی کلو 235 روپے سے بڑھا کر 240 روپے مقرر، دال چھلکا کی قیمت فی کلو 125 روپے سے بڑھا کر 130 روپے مقرر، کالے چنے کی قیمت فی کلو 124 روپے سے بڑھا کر 135 روپے مقرر،

سفید چنا کی قیمت فی کلو 135 روپے سے بڑھا کر 155 روپے مقرر، بیسن کی قیمت فی کلو 135 روپے سے بڑھا کر 140روپے مقرر، دودھ کی قیمت فی کلو 100 روپے مقرر، دہی کی قیمت فی کلو 120 روپے مقرر، مٹن کی قیمت فی کلو 950 روپے مقرر، بیف کی قیمت فی کلو 500 روپے مقرر کر دی گئی۔

ڈی سی لاہور کا کہنا ہے کہ پانی، کولڈرنک اور جوسسز کی قیمت کمپنی کی پرنٹ شدہ تصور ہو گی۔ قیمت پرنٹ شدہ نہ ہے تو انوائس سے پانچ فیصد زیادہ لی جا سکتی ہے۔

ڈپٹی کمشنر کا مزید کہنا ہے کہ قیمت کے حوالے سے شکایات قیمت پنجاب ایپ پر درج کروائی جائیں۔ شہری شکایات ٹال فری نمبر 02345-0800 پر درج کروائیں۔

اشیائے خورونوش کی

ڈاکٹر وحید قریشی بطور محقق

قارئین : ہماری کاوش پسند آئے تو شیئر ، اپڈیٹ رہنے کیلئے فالو کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں