چیک پوسٹ مسلح دہشتگردوں 70

لورالائی میں دہشتگردوں کا ایف سی کی گاڑی پر حملہ، جوان شہید

Spread the love

لورالائی دہشتگردوں کا حملہ

لور الائی،راولپنڈی (صرف اردو آن لائن نیوز) بلوچستان کے علاقے لور الائی کے قریب ایف سی کی گاڑی پر دہشت گردوں کے حملے میں ایک اہلکار شہید اور میجر سمیت دو اہلکار زخمی ہو گئے ۔

پاک فوج کے شعبہ تعلقات عامہ (آئی ایس پی آر) کے مطابق لورا لائی کے قریب ایف سی کی گاڑی معمول کی گشت پر تھی گھات لگائے دہشتگردوں نے حملہ کردیا ، جس سے نائیک شریف شہید اورمیجر قا سم اور ایک اہلکار زخمی ہو گیا۔

آئی ایس پی آر کے مطابق ایف سی جوانوں کی جانب سے فوری جوابی کارروائی کی گئی جس میں 3 دہشتگرد ہلاک ہو گئے۔پاک فوج کے شعبہ تعلقا ت عا مہ کے مطابق دہشت گرد حملے میں زخمی ہونیوالے ایف سی اہلکاروں کو سی ایم ایچ کوئٹہ منتقل کر دیا گیا ۔

وزیر داخلہ شیخ رشید نے لورالائی میں ایف سی کی گاڑی پر دہشت گردوں کی فائر نگ کی شدید مذمت کرتے ہوئے شہید نائیک شریف کے لواحقین سے اظہار تعزیت کیا اور زخمیوں کی جلد صحتیابی کیلئے دعا کی۔

شیخ رشید نے کہا ایف سی کی گاڑی پر فائرنگ انتہائی بزدلانہ کارروائی ہے، دہشت گردی کی بزدلانہ کارروائیاں ہماری فورسز کے حوصلے پست نہیں کر سکتیں۔

دوسری طرف صدر مملکت ڈاکٹر عارف علوی، وزیر اعظم عمران خان،عسکری قیادت ، چیئر مین سینٹ صادق سنجرانی اورسیاسی رہنماؤں نے بلوچستان کے علاقہ لورالائی کے قر یب ایف سی کی گاڑی پر فائرنگ کے واقعہ کی شدید الفاظ میں مذمت کرتے ہوئے کہا قانون نافذ کرنیوالے اداروں کی امن کیلئے دی گئی قربانیاں رائیگاں نہیں جا ئینگی ،

انہوں نے فائرنگ کے نتیجے میں شہید ہونیوالے نائیک کی بلند درجات کیلئے دعا کی اور فائر نگ کے نتیجے میں زخمی ہونیوالوں کی جلد صحتیابی کیلئے دعا گو ہیں۔

انہوں نے اس طرح کی بزد لانہ تخریبی کارروائیوں سے ملک اور بالخصوص بلوچستان کے امن کو نقصان پہنچانے کی ہر کوشش ناکام ہوگی۔ دہشتگرد پوری انسانیت کے دشمن ہیں، ملک دشمن عناصر کو بلوچستان میں قربانیوں سے حاصل کیا گیا امن سبوتاڑ نہیں کرنے دیں گے۔

لورالائی دہشتگردوں کا حملہ

ڈاکٹر وحید قریشی بطور محقق

قارئین : ہماری کاوش پسند آئے تو شیئر ، اپڈیٹ رہنے کیلئے فالو کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں