الیکشن کمیشن رائے دہندگان 55

آزاد کشمیر میں عام انتخابات کیلئے پولنگ آج ہوگی

Spread the love

آزاد کشمیر عام انتخابات

مظفر آباد/لاہور/راولپنڈی(صرف اردو آن لائن نیوز) آزاد کشمیر میں عام انتخابات کیلئے پولنگ (آج)اتوار 25جولائی کو ہوگی ،32لاکھ سے زائد ووٹر 45 نشستوں پر امیدواروں کا چنائو کرینگے،امن و امان کی صورتحال کو کنٹرول میں رکھنے کیلئے دیگر قانون نافذ کرنے والے اداروں کے ساتھ پاک فوج کے جوان سکیورٹی کے فرائض سر انجام دیں گے ۔

تفصیلات کے مطابق آزاد کشمیر میں عام انتخابات کل بروزاتوار25جولائی کو منعقد ہوں گے جس کیلئے تیاریاں مکمل ہیں ۔قانون سازی اسمبلی کی 45نشستوں کیلئے پاکستان تحریک انصاف، پاکستان مسلم لیگ (ن)،پاکستان پیپلز پارٹی اور جماعت اسلامی سمیت دیگر جماعتوں کے 742 امیدواران میدان میں ہیں جبکہ مجموعی طورپر32 لاکھ 20 ہزار 546 ووٹرزاپنے ووٹ کا حق استعمال کریں گے ۔

عام انتخابات میں متعدد اہم سیاسی شخصیات بھی انتخابی میدان میں موجود ہیں جن میں پی ٹی آئی کے صدر و سابق وزیراعظم بیرسٹر سلطان محمود میرپور، تنویر الیاس باغ، آل جموں و کشمیر مسلم کانفرنس کے صدر و سابق وزیراعظم سردار عتیق دھیرکوٹ باغ، سابق صدر و وزیراعظم سردار یعقوب راولاکوٹ جبکہ پیپلز پارٹی کے صدر چوہدری لطیف اکبر کھاوڑہ مظفرآباد سے بطور امیدوار ہیں۔

چوہدری یاسین پیپلز پارٹی کے ٹکٹ پر کوٹلی کے دو حلقوں سے، شاہ غلام قادر نیلم کے حلقہ شاردہ اور چوہدری طارق فاروق بھمبھر سے قسمت آزمائی کریں گے۔انتخابات میں تحریک انصاف ،پیپلز پارٹی اور مسلم لیگ (ن)کے امیدواروں کے درمیان کانٹے دار مقابلہ کا امکان ہے ۔

آزاد کشمیر کے 10اضلاع کے لیے 33نشستیں ہیں اور مہاجرین جموں و کشمیر پاکستان کے لیے 12نشستیں ہیں اس مرتبہ جو رولز بنائے گئے ہیں ان کے مطابق ہر ووٹر اپنا ووٹ اسی حلقہ میں پول کرے گا جہاں اس کا مستقل ایڈریس شناختی کارد پر درج ہے اس کے علاوہ عارضی پتہ پر ووٹ نہیں ڈالا جا سکتا

ایک اور اہم ترمیم یہ کی گئی ہے کہ مہاجرین جموں و کشمیر مقیم پاکستان میں 6نشستیںجموں و دیگر کے لیے مختص ہیں اور 6 نشستیں وادی کے لیے مختص ہیں جس طرح پہلے وادی کے انتخابی حلقوں میں وہی امیداور حصہ لے سکتا تھا جو وادی کا مہاجر ہو اسی طرح اب جموں و دیگر کے انتخابی حلقوں میں وہی امیدوار انتخاب لڑنے کا اہل ہے جس کا تعلق برائے راست جموں و دیگر کے علاقوں سے ہے آزاد کشمیر سے تعلق رکھنے والا کوئی امیدوار اب مہاجرین کے لیے مختص نشستوں کے لیے انتخاب نہیں لڑ سکتا ۔

آئی ایس پی آر کے مطابق پاک فوج 25 جولائی کو آزاد کشمیر انتخابات میں سکیورٹی فرائض انجام دے گی۔آزاد کشمیر کے الیکشن کمیشن نے پاک فوج کو سکیورٹی اور پرامن ماحول کے انتظامات کیلئے طلب کیا ہے۔

ترجمان پاک فوج کے مطابق پاک فوج کی کوئیک ری ایکشن فورس کے تحت 22 سے 26 جولائی تک تعینات ہو گی، یہ تعیناتی آئین کے آرٹیکل 245 کے تحت کی گئی ہے،

آزاد کشمیر میں پرامن انتخابات کیلئے آزاد کشمیر پولیس کے ساتھ دیگر صوبوں کے قانون نافذ کرنیوالے اداروں کے اہلکار اور نیم فوجی دستے بشمول رینجرز اور ایف سی اہلکار بھی فرائض سرانجام دیں گے۔

ذرائع کے مطابق پاک آرمی کا پولنگ سٹیشنوں، پولنگ کے عمل یا انتخابی سامان کی ترسیل سے کوئی تعلق نہیں ہوگا۔دوسری جانب آزاد کشمیر میں 5 ہزار 123 پریذائیڈنگ افسران، 7 ہزار 336 پولنگ افسران، 14 ہزار 672 پولنگ اسسٹنٹ تعینات کیئے گئے ہیں،

پاکستان میں مقیم مہاجرینِ جموں و کشمیر کے 12 انتخابی حلقوں کے لیے بھی پولنگ کا عملہ تعینات کیا گیا ہے۔پولنگ کے لیے 40 ہزار پولیس اہلکار الیکشن ڈیوٹی انجام دیں گے، پاک فوج کے 6 سے 7 ہزار جوان بھی امن و امان کو یقینی بنانے کے لیے تعینات ہوں گے

اس حوالے سے الیکشن کمیشن آزاد کشمیر کے ریٹرننگ افسر کا کہنا ہے کہ آزاد کشمیر انتخابات کیلئے بیلٹ پیپرز سمیت دیگر پولنگ کے سامان کی ترسیل کی جا رہی ہے۔

آزاد کشمیر عام انتخابات

ڈاکٹر وحید قریشی بطور محقق

قارئین : ہماری کاوش پسند آئے تو شیئر ، اپڈیٹ رہنے کیلئے فالو کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں