74

پاکپتن ،زہریلا کھانا کھانے سے ماں اور چار بچوں کی ہلاکت کا ڈراپ سین،مقتول بچوں کے کزن ملوث نکلے

Spread the love

پاکپتن (صرف اردو آن لائن نیوز) زہریلا کھانا کھانے سے

پاکپتن کی تحصیل عارف والا میں چند روز قبل زہریلا کھانا کھانے سے ماں اور چار بچوں کی ہلاکت کا ڈراپ سین ہوگیا، مقتول بچوں کے نوعمر کزن واقعے میں ملوث نکلے۔

تفصیلات کے مطابق عارف والا کے نواحی گاؤں 143 ای بی میں 8 روز قبل راؤ توفیق کی فیملی نے اچار اور پراٹھوں کا ناشتہ کیا جس کے بعد ماں اور اس کے چار بچوں کی حالت غیرہوگئی،

تمام افراد کو اسپتال منتقل کیا گیا جہاں وہ دم توڑ گئے۔پولیس نے اچار اور گھی سمیت دیگر اشیا فرانزک کے لیے بھجوائیں تو ان میں زہر کے شواہد مل گئے

جس پر پولیس نے شک کی بنیاد پر مقتول بچوں کے کزن حمزہ اور علی عظیم کو حراست میں لیا تو انہوں نے اعتراف جرم کرلیا۔

پولیس حکام نے میڈیا کو بتایا کہ ملزم حمزہ کو اس کی ممانی نے ڈانٹ پلائی تھی جس کی رنجش پر اس نے علی کی مدد سے ان کے کھانے میں زہریلی گولیاں ملانے کا منصوبہ بنایا۔

مقتول بچوں کے والد توفیق کا کہنا ہے کہ اس نے اپنے بھانجے اور بھتیجے کو خود پولیس کے حوالے کیا، ملزمان کو ان کے کیے کی سزا ملنی چاہیے۔پولیس نے ملزمان کے خلاف مقتول بچوں کے ماموں کی مدعیت میں مقدمہ بھی درج کرلیا ہے۔

زہریلا کھانا کھانے سے

ڈاکٹر وحید قریشی بطور محقق

قارئین : ہماری کاوش پسند آئے تو شیئر ، اپڈیٹ رہنے کیلئے فالو کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں