48

اسسٹنٹ کمشنر پاکپتن پر تشدد کے الزام میں(ن)لیگی ایم پی اے نوید علی گرفتار

Spread the love

اسسٹنٹ کمشنر پاکپتن تشدد

لاہور(صرف اردو آن لائن نیوز) پولیس نے ہائی کورٹ میں درخواست ضمانت خارج ہونے کے بعد(ن)لیگ کے

رکن پنجاب اسمبلی نوید علی کو اسسٹنٹ کمشنر پاکپتن کو تھپڑ مارنے اور اغوا کرنے سے متعلق کیس

میں گرفتار کرلیا۔ تفصیلات کے مطابق لاہور ہائی کورٹ کے جسٹس شہرام سرور نے ایم پی اے

نوید علی کی اسسٹنٹ کمشنر پاکپتن کو تھپڑ مارنے اور اغوا کرنے سے متعلق کیس میں ضمانت کی

درخواست پر سماعت کی۔ نوید علی اور ان کے والد احمد رانا عبوری ضمانت کی معیاد ختم ہونے پر

عدالت میں پیش ہوئے، عدالتی حکم پر ایڈیشنل آئی جی انویسٹی گیشن کی جانب سے رپورٹ عدالت

میں پیش کی گئی۔ عدالت نے شواہد کی روشنی میں نوید علی کی درخواست ضمانت مسترد کردی۔ جس

کے بعد پولیس نے (ن)لیگی رکن پنجاب اسمبلی کو گرفتار کرلیا۔عدالتی حکم پر ایڈیشنل آئی جی

انویسٹی گیشن کی جانب سے رپورٹ عدالت میں پیش کی گئی۔ عدالت نے شواہد کی روشنی میں نوید

علی کی درخواست ضمانت مسترد کردی۔ جس کے بعد پولیس نے (ن)لیگی رکن پنجاب اسمبلی کو

گرفتار کرلیا۔

اسسٹنٹ کمشنر پاکپتن تشدد

ڈاکٹر وحید قریشی بطور محقق

قارئین : ہماری کاوش پسند آئے تو شیئر ، اپڈیٹ رہنے کیلئے فالو کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں