غزہ اسرائیلی بمباری جاری 29

اسرائیلی جنگی طیاروں کی غزہ پر وحشیانہ بمباری جاری ، مزید26فلسطینی شہید

Spread the love

غزہ پر وحشیانہ بمباری

نیویارک ،غزہ (صرف اردو آن لائن نیوز) غزہ کی پٹی پر اسرائیلی طیاروں نے پیر کے روز بھی شدید

بم باری کی ۔عرب میڈیا کے مطابق اسرائیلی طیاروں نے کم از کم 70 حملے کئے۔خبرایجنسی کے

مطابق اسرائیلی میزائل انتہائی گنجان آباد ساحلی علاقے میں گرے۔ اسرائیلی بمباری کے نتیجے میں

مزید 26 فلسطینی شہیدہو گئے۔واضح رہے کہ اسرائیلی حملوں میں شہید افراد کی تعداد2 18 ہو گئی

جبکہ 1200 سے زائد زخمی ہیں۔ ان حملوں میں فلسطینیوں کے سیکڑوں مکانات اور دیگر املاک تباہ

ہوچکے ہیں۔اسرائیلی فوج کے مطابق انہوں نے اتوار کی شب حماس کے ایک ٹاپ لیڈر یحییٰ السنوار

کے گھر کو نشانہ بنایا ۔ حماس کے اس لیڈر کا گھر غزہ کے جنوبی علاقے خان یونس میں واقع ہے۔

اطلاعات کے مطابق اس حملے میں بھی کم از کم دس عام شہری شہیدہو گئے ہیں، جن میں زیادہ تر

بچے شامل ہیں۔حماس کے زیر کنٹرول غزہ میں حالیہ تنازعہ کے نتیجے میں شہدا کی تعداد 200سے

زائد ہو گئی ہے۔ ان شہداء میں 47 بچے اور 23 خواتین شامل ہیں۔اس دوران حماس کی جانب سے

اسرائیل پر راکٹ داغے جانے کا سلسلہ جاری رہا۔ حماس نے یہ تسلیم کیا ہے کہ اس کے اب تک بیس

جنگجو شہید ہو چکے ہیں۔غزہ کی وزارت صحت کی جانب سے کہا گیا ہے کہ غزہ شہر کے مرکز

میں تین مختلف عمارتوں پر اسرائیلی بمباری کے باعث 26 افراد شہید ہو گئے ہیں جبکہ اس حملے

میں پچاس افراد زخمی ہوئے ہیں۔ شہداء میں دس خواتین اور آٹھ بچے شامل ہیں۔ اس حوالے سے

یورپی یونین کے وزرائے خارجہ کا ایک ہنگامی اجلاس منگل کے روز طلب کر لیا گیا ہے۔ یورپی

یونین کے فارن پالیسی چیف جوزف بوریل کا کہنا تھا کہ فلسطینیوں اور اسرائیل کے مابین بڑھتی

ہوئی لڑائی اور ناقابل قبول عام شہریوں کی ہلاکتوں کی وجہ سے یہ ہنگامی ویڈیو اجلاس طلب کیا گیا

ہے۔ یورپی یونین کے مطابق وہ اس لڑائی کے جلد از جلد خاتمے کی خواہاں ہے

غزہ پر وحشیانہ بمباری

ڈاکٹر وحید قریشی بطور محقق

قارئین : ہماری کاوش پسند آئے تو شیئر ، اپڈیٹ رہنے کیلئے فالو کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں