فیاض احمد علیگ ڈاکٹر 54

غزل (ڈاکٹر فیاض احمد علیگ)

Spread the love

ڈاکٹر فیاض احمد علیگ کا تعلق ہندوستان سے ہے اور علمی حلقوں میں ان کا نام کسی تعارف کا محتاج نہیں ہے بینا پارہ اعظم گڑھ میں بحثیت استاد اور قریب ہی بطور معالج خدمات انجام دیتے ہیں ڈاکٹر فیاض احمد علیگ ہمہ جہت شخصیت کے مالک ہیں انہیں جس قدر دسترس طب و جراحت پر ہے اسی قدر شعر و سخن میں بھی ہے، یہی نہیں وہ تحریر و تحقیق کے فن میں بھی طاق ہونے کے ساتھ ساتھ اپنا ایک منفرد نام و مقام رکھتے ہیں ہم نے اس سے قبل بھی ڈاکٹر صاحب کے متعدد فن پارے شائع کئے ہیں اور ساتھ ساتھ ان کے تحقیقی مضامین بھی شائع ہوتے رہتے ہیں ہمارے ہاں جن لوگوں کے گذشتہ برس میں سب سے زیادہ پڑھا گیا ہے ان میں پروفیسر شمیم ارشاد اعظمی اور ڈاکٹر فیاض احمد علیگ ہی ہیں۔یہ بھی لکھنا ضروری ہے کہ ان کی غیر حاضری کو ہم تو محسوس کرتے ہیں کہ یہ ہمارے بہت محسن اور اچھے دوست و مشیر ہیں ہمارے ساتھ قارئین کرام بھی یاد کرتے ہیں اور ان کے مضامین سب سے زیادہ تلاش کئے جاتے ہیں۔ ہمارے معاونین میں یہ دونوں وہ احباب ہیں جن کی تحقیق کو ابھی تک کسی نے چیلنج نہیں کیا

پھول خوشبو چاند سورج روشنی لے آئے ہیں
زندگی تیرے لئے ہم ہر خوشی لے آئے ہیں

روشنی کی انجمن سے تیرگی لے آئے ہیں
شہر جا کر لوگ اکثر گمرہی لے آئے ہیں۔

تم ہماری جان کے دشمن ہو جانی اس لئے
تیری خاطر جان اپنی پیشگی لے آئے ہیں۔

کیوں زمانہ اس قدر ناراض آخر ہے میاں
ہم زمانے کے لئے تو روشنی لے آئے ہیں ۔

زندگی فٹ پاتھ پر ہنستی ہوئی ہم کو ملی
ہم اٹھا کر بس وہیں سے کچھ ہنسی لے آئے ہیں۔

حسن بے پروا کی یارو سادگی کو دیکھ کر
ہم بھی اپنی زندگی میں سادگی لے آئے ہیں۔

لوگ دریا کو سمجھتے ہیں بہت فیاض ہے
ہم اسی دریا سے دیکھو تشنگی لے آئے ہیں۔
ڈاکٹر فیاض احمد (علیگ)

ڈاکٹر وحید قریشی بطور محقق

قارئین : ہماری کاوش پسند آئے تو شیئر ، اپڈیٹ رہنے کیلئے فالو کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں