جو بائیڈن مودی کو فون 33

جمہوری اقدار ہی ہمارے تعلقات کی بنیادوں میں شامل ، جو بائیڈن کا مودی کو فون

Spread the love

جو بائیڈن مودی کو فون

واشنگٹن ،نئی دہلی (صرف اردو آن لائن نیوز) امریکی صدر جو بائیڈن نے بھارتی

وزیراعظم نریندر مودی کے ساتھ اپنے پہلے ٹیلیفونک رابطے میں دو طرفہ تعلقات

کو مزید مضبوط بنانے اور دنیا میں موسمیاتی تبدیلی اور جمہوری اقدار کے دفاع

پر گفتگو کی ہے ۔ صدر بائیڈن نے بھارت کے وزیراعظم کے ساتھ گفتگو میں

موسمیاتی تبدیلی کو ایجنڈے میں شامل کیا جو عالمی درجہ حرات میں اضافے پر

ان کی پالیسی کی ترجیحات کا حصہ ہے ۔وائٹ ہاوس سے جاری بیان کے مطابق

دونوں رہنماوں نے کورونا کی وبا سے نمٹنے کیلئے مل کر کام کرنے، موسمیاتی

تبدیلی پر اشتراک کار، عالمی معیشت کو دونوں ملکوں کے عوام کے فائدے کیلئے

استوار کرنے اور عالمی دہشت گردی کے خلاف اکھٹے ہونے کے عزم کا اعادہ

کیا۔نئی دہلی سے جاری بیان کے مطابق صدر جو بائیڈن کی جانب سے موسمیاتی

مسئلے پر گفتگو اور پیرس معاہدے میں امریکہ کے واپس آنے کا خیرمقدم کیا گیا

ہے۔ نریندر مودی امریکی صدر جو بائیڈن کی جانب سے اپریل میں بلائی گئی

موسمیاتی کانفرنس میں شرکت کریں گے۔ بھارت کو دنیا میں امریکہ اور چین کے

بعد فضا میں کاربن ڈائی آکسائیڈ خارج کرنے والا تیسرا بڑا ملک قرار دیا جاتا ہے

تاہم بھارت کا موقف رہا ہے اس کو اس معاملے میں ترقی یافتہ ملکوں کے ساتھ

ایک جیسے قوانین پر عمل کے لیے مجبور کرنا ناانصافی ہوگی۔ وائٹ ہاوس کے

مطابق صدر بائیڈن نے وزیراعظم مودی سے گفتگو میں دنیا میں جمہوری اداروں

اور اقدار کے تحفظ کی اپنی خواہش کا اظہار کیا اور کہا کہ جمہوری قدریں ہی

امریکہ اور انڈیا کے تعلقات کی بنیادوں میں شامل ہیں ۔صدر بائیڈن نے وزیراعظم

مودی سے میانمار کی صورتحال پر بھی بات کی جہاں گزشتہ ہفتے فوج نے اقتدار

سنبھال لیا تھا۔

جو بائیڈن مودی کو فون

ڈاکٹر وحید قریشی بطور محقق

قارئین : ہماری کاوش پسند آئے تو شیئر ، اپڈیٹ رہنے کیلئے فالو کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں