پاکستان نے جنوبی افریقہ 38

پاکستان نے جنوبی افریقہ کو راولپنڈی ٹیسٹ میں 95 رنز سے شکست دے دی

Spread the love

لاہور( صرف اردو آن لائن نیوز) حسن علی اور محمد رضوان کی شاندارکارکردگی کی بدولت پاکستان نے جنوبی افریقہ کو راولپنڈی ٹیسٹ میں 95

رنز سے شکست دے کر دو میچز کی سیریز کلین سویپ کر لی جبکہ ٹیسٹ سیریز

کلین سویپ کے بعد پاکستان کی ٹیم آئی سی سی ورلڈ ٹیسٹ چیمپن شپ پوائنٹس ٹیبل

پر پانچویں نمبر پر آگئی ہے، میچ کے آخری روز 370 رنز کے تعاقب میں مہمان

ٹیم 274 پر ڈھیر ہو گئی، اوپنر ایڈن مارکرم نے 108 رنز کی دلکش اننگز کھیلی

تاہم وہ اپنی ٹیم کو شکست سے نہ بچا سکے، حسن علی نے دوسری اننگز میں بھی

تباہ کن باﺅلنگ کی اور 5 وکٹیں لے کر پاکستان کی جیت میں اہم کر دار ادا کیا،

شاہین شاہ آفریدی نے 4 کھلاڑیوں کو آﺅٹ کیا، حسن علی کو میچ میں مجموعی

طور پر 10 وکٹیں حاصل کرنے پر مرد میدان قرار دیا گیا جبکہ دوسری اننگز

میں ناقابل شکست سنچری بنانے والے وکٹ کیپر بیٹسمین محمد رضوان سیریز کے

بہترین پلیئر قرار پائے حسن علی نے دوسری اننگز میں بھی 5 وکٹیں حاصل کیں

اور میچ میں مجموعی طور پر 114 رنز کے عوض اپنے 10 شکار مکمل کیے،

یہ کسی بھی پاکستانی باﺅلر کی جانب سے جنوبی افریقہ کے خلاف ٹیسٹ میچ میں

بہترین باﺅلنگ کارکردگی تھی۔قومی ٹیم کے سابق کپتان اور موجودہ باﺅلنگ کوچ

وقار یونس نے 1998ئ_ میں پورٹ ایلزبتھ ٹیسٹ میں 133 رنز کے عوض 10

وکٹیں حاصل کی تھی۔راولپنڈی کرکٹ سٹیڈیم میں ٹیسٹ کے پانچویں اور آخری

روز جنوبی افریقہ نے 370 رنز کے تعاقب میں 127 رنز ایک کھلاڑی آﺅٹ پر

اننگز دوبارہ شروع کی تو ایڈن مارکرم 59 اور وین ڈر ڈاسن 48 رنز کے ساتھ

ناٹ آﺅٹ تھے، ڈاسن گزشتہ روز کے سکور میں کوئی اضافہ کئے بغیر حسن علی

کی گیند پر کلین بولڈ ہو گئے، فاف ڈوپلیسی بھی زیادہ دیر وکٹ پر نہ ٹھہر سکے

اور 5 رنز بناکر حسن علی کی گیند پر ایل بی ڈبلیو ہو گئے، اس موقع پر ایڈن

مارکرم اور تیمبا بووما نے عمدہ بیٹنگ کا مظاہرہ کیا اور چوتھی وکٹ میں 107

رنز کی شراکت قائم کرکے ٹیم کا سکور 241 تک پہنچا دیا، مارکرم نے کیریئر کی

پانچویں سنچری سکور کی، اس موقع پر جنوبی افریقہ کی جیت کے امکانات

روشن ہو گئے تھے تاہم حسن علی نے لگاتار دو گیندوں پر ایڈن مارکرم اور کپتان

کوئنٹن ڈی کاک کو آﺅٹ کرکے پاکستان کو میچ میں واپس لے آئے، مارکرم 108

اور ڈی کاک صفر پر سلپ میں عمران بٹ کے ہاتھوں کیچ آﺅٹ ہو گئے، جلد ہی

شاہین آفریدی نے تیمبا بووما کو 61 کے انفرادی سکور پر آﺅٹ کرکے پاکستان کو

ایک اور اہم کامیابی دلا دی، جارج لنڈے 4 رنز بناکر حسن علی جبکہ کیشو مہاراج

اور کگیسو ربادا بغیر کوئی رن بنائے شاہین آفریدی کا شکار بنے، یاسر شاہ نے

ویان مولڈر کو 20 کے انفرادی سکور پر کلین بولڈ کر دیا، اس طرح جنوبی افریقہ

کی پوری ٹیم 274 رنز بناکر آﺅٹ ہو گئی اور پاکستان نے یہ میچ 95 رنز سے

جیت لیا، حسن علی نے پانچ، شاہین آفریدی نے چار اور یاسر شاہ نے ایک وکٹ

حاصل کی۔ حسن علی کو میچ اور محمد رضوان کو سیریز کا بہترین پلیئر قرار دیا

گیا قومی کرکٹ ٹیم کے کپتان بابر اعظم نے کہا کہ جیت ٹیم ورک کانتیجہ ہے اور

تمام کھلاڑیوں نے عمدہ کھیل پیش کیا خاص طور پر باﺅلرز توقعات پر پورا اتریں حسن علی اور شاہین شاہ آفریدی کی باﺅلنگ کی جتنی تعریف کی جائے کم ہے

دوسری جانب پروٹیز کپتان ڈی کوک نے کہا کہ میچ جیتنے کی پوری کوشش کی مگر پاکستانی باﺅلرز نے عمدہ باﺅلنگ کا مظاہرہ کیا پاکستان نے دونوں ٹیسٹ

میچوں میں اچھے کھیل کی بدولت جیت اپنے نام کی۔

پاکستان نے جنوبی افریقہ

صدارتی امیدوار جو بائیڈن نے ٹی وی مباحثے میں ٹرمپ کو ’مسخرہ‘ کہہ دیا

قارئین : ہماری کاوش پسند آئے تو شیئر ، اپڈیٹ رہنے کیلئے فالو کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں