ایرانی خطرات امریکی طیارے 33

ایرانی خطرات، امریکی بی 52طیارے مشرق وسطی میں تعینات

Spread the love

ایرانی خطرات امریکی طیارے

واشنگٹن (صرف اردو آن لائن نیوز) ایران کی طرف سے خطے کو درپیش

خطرات کے پیش نظر حالیہ ہفتوںکے دوران امریکا کے بی 52جنگی طیاروں کو

متعدد بار مشرق وسطی میں بھیجا گیا ہے۔ میڈیارپورٹس کے مطابق امریکی سینٹرل

کمانڈ کے کمانڈر فرینک میکنزی نے اعلان کیا کہ بمبار طیاروں نے مشرق وسطی

میں کامیابی کے ساتھ اپنا فضائی سفر مکمل کرلیا ہے۔ انہوں نے کہا کہ بمبار ٹاسک

فورس سے وابستہ مشن علاقائی سلامتی کے لیے امریکا کے مستقل عزم کا واضح

ثبوت ہے۔انہوں نے مزید کہا کہ ایک مختصر مدت کے لیے اسٹریٹجک طیاروں کی

تعیناتی خطے میں ہماری دفاعی پوزیشن کا ایک اہم حصہ ہے۔ امریکی بی باون

طیارے اسرائیل کی فضائی حدودسے گذر کر خلیج ممالک میں داخل ہوئے ہیں۔

امریکی عہدے داروں نے پہلے بھی اشارہ کیا تھا کہ یہ پروازیں ایران کے خلاف

بازی کا واضح پیغام ہیں،امریکا کے جدید بمبار طیارے ایک ایسے وقت میں مشرق

وسطی کے لیے روانہ ہوئے ہیں جب دوسری طرف یہ اطلاعات ہیں کہ ایران نے

بحر ہند میں اپنے جدیدترین میزائل کا تجربہ کرتے ہوئے امریکی بحری بیڑے کے

قریب میزائل داغے۔

ایرانی خطرات امریکی طیارے

ڈاکٹر وحید قریشی بطور محقق

قارئین : ہماری کاوش پسند آئے تو شیئر ، اپڈیٹ رہنے کیلئے فالو کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں