36

اسرائیل کی شام پر بدترین فضائی کارروائی، 57 افراد ہلاک

Spread the love

تل ابیب (صرف اردو آن لائن نیوز) اسرائیل کی فضائی کارروائی

اسرائیل نے شام کے مشرقی علاقے میں حالیہ برسوں کے دوران بدترین فضائی

کارروائی کرتے ہوئے بشارالاسد حکومت کے 57 حامیوں کو ہلاک کر

دیا،غیرملکی خبررساں ادارے کے مطابق انسانی حقوق کی تنظیم سیرین آبزرویٹری

کا کہنا تھا کہ اسرائیلی فورسز نے عراقی سرحد سے متصل مشرقی علاقے

دیرالزور میں مختلف مقامات میں 18 حملے کیے۔تنظیم کا کہنا تھا کہ اسرائیلی

کارروائیوں میں شامی فورسز کے 14 اہلکار، عراقی ملیشیا کے 16 اہلکار اور

ایرانی حمایت یافتہ فاطمید بریگیڈ کے 11 افغان اہلکار مارے گئے ہیں اور دیگر

37 افراد بھی نشانہ بنے۔بیان میں کہا گیا کہ لبنان کی حزب اللہ تحریک سے تعلق

رکھنے والے پیراملٹری اہلکار اور فاطمید بریگیڈ خطے میں ایرانی حمایت یافتہ

افغان جنگجوں کے ساتھ متحرک ہیں۔رپورٹ کے مطابق شام میں کارروائی سے

قبل فاطمید بریگیڈ نے ہمسایہ ملک عراق سے ایرانی ساختہ اسلحہ مشرقی شامل

منتقل کردیا تھا۔انسانی حقوق کی تنظیم کا کہنا تھا کہ انہوں نے اسلحے کو اسی

علاقے میں رکھا تھا جہاں یہ حملہ ہوا ہے جبکہ اسرائیلی فوج نے اس حوالے سے

کوئی بیان جاری نہیں کیا۔برطانوی تنظیم کا کہنا تھا کہ فوری طور پر دوسرے

حملے کے ذمہ داروں کا تعین نہیں ہوسکا۔

اسرائیل کی فضائی کارروائی

ڈاکٹر وحید قریشی بطور محقق

قارئین : ہماری کاوش پسند آئے تو شیئر ، اپڈیٹ رہنے کیلئے فالو کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں