15

ملک میں 5 روزہ انسداد پولیو مہم کا آغاز

Spread the love

پولیو مہم کا آغاز

اسلام آباد (صرف اردو آن لائن ہیلتھ نیوز) پاکستان میں سخت حفاظتی اقدامات اور

پروٹوکولز کے تحت رواں سال کی پہلی پولیو مہم کا آغاز پیر سے ہوگیا۔ میڈیا

رپورٹ کے مطابق 5 روزہ انسداد پولیو مہم پیر سے شروع ہورہی ہے جس میں

ملک بھر میں 5 سال سے کم عمر 4 کروڑ بچوں کو پولیو کے قطرے پلائے جائیں

گے،اس کے علاوہ 59 ماہ تک کی عمر کے بچوں کو وٹامن اے کے قطرے کی

ضمنی خوراک بھی دی جائے گی، یہ حساس بچوں میں پولیو اور دیگر بیماریوں

سے تحفظ کے لیے عام مدافعت پیدا کرنے میں مدد کرے گی۔ادھر قومی ایمرجنسی آپریشن سینٹر (این ای او سی) کے جاری کردہ اعداد و شمار کے مطابق تقریباً

2 لاکھ 85 ہزار فرنٹ لائن ورکرز والدین اور نگرانوں کے گھروں تک جائیں گے

اور اب کووڈ 19 کے سخت حفاظی اقدامات اور پروٹوکولز کا اپناتے ہوئے بچوں

کو ویکسین دیں گے، ان اقدامات میں ماسک پہننا، ہینڈ سینیٹائزر کا استعمال کرنا

اور ویکسینیشن کے دوران مناسب فاصلہ برقرار رکھنا شامل ہے اس حوالے سے

وزیراعظم کے معاون خصوصی برائے صحت ڈاکٹر فیصل سلطان نے کہا کہ ہمارا

مقصد بچوں کو بروقت اور بار بار ویکسینیشن کو یقینی بنانا ہے، یہ مدافعتی فرق

کو کم کرنے اور بچوں کو پولیو اور دیگر بیماریوں سے محفوظ رکھنے میں اہم

ہے۔انہوں نے کہا کہ حکومت پولیو فری پاکستان کے مقصد کے حصول کے لیے

پرعزم ہے تاہم اس کے لیے قوم خاص طور برادریوں اور 5 سال سے کم عمر

بچوں کے والدین اور نگرانوں کی مکمل حمایت ضروری ہے۔ڈاکٹر فیصل سلطان

نے کہا کہ سال 2021 میں 2020 میں اٹھائے گئے فائدے کو بڑھانے کا ایک بہتر

موقع ہے، اس پروگرام کے تحت 2020 میں مختلف اسٹیک ہولڈرز کی مدد اور

ہمارے ہیروز فرنٹ لائن ورکرز کی لگن سے 6 بہترین مہمات پر عمل کیا گیا،

ہمارے ہیروز نے کووڈ 19 کے خطرناک سے متعلق اثرات سے بچتے ہوئے اعلیٰ

کوالٹی مہمات پر محفوظ طریقے سے عمل کیا۔

پولیو مہم کا آغاز

ڈاکٹر وحید قریشی بطور محقق

قارئین : ہماری کاوش پسند آئے تو شیئر ، اپڈیٹ رہنے کیلئے فالو کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں