69

اپریل 2016ء سے اب تک صہیونی فوج نے 68 فلسطینی شہداء کے جسد خاکی قبضے میں لئے، میڈیا رپورٹ

Spread the love

مقبوضہ بیت المقدس (صرف اردو آن لائن نیوز) فلسطینی شہداء جسد خاکی

اسرائیلی عبرانی اخبارنے اپنی رپورٹ میں بتایا ہے کہ اپریل 2016ء سے اب تک

صہیونی فوج نے 68 فلسطینی شہداء کے جسد خاکی قبضے میںلئے۔ اسرائیلی فوج

نے انسانی حقوق کے اداروں کے مطالبات اور شہدا کے اہل خانہ کی طرف سے

بار بارآواز اٹھانے کے باوجود درجنوں شہدا کو اب بھی تحویل میں رکھا ہوا ہے

اور ان کے خاندانوں کو نفسیاتی اذیت پہنچائی جا رہی ہے۔اسرائیلی اخبار نے لکھا

ہے کہ گزشتہ چند برسوں سے اسرائیلی فوج نے شہدا کے جسد خاکی قبضے میں

لینے کی پالیسی اپنا رکھی ہے، ایسے فلسطینی جنہیں مبینہ مقابلے میں شہید کیا جاتا

ہے ان کے جسد خاکی ان کے ورثا کے حوالے نہیں کیے جاتے اور انہیں اسرائیلی

فوج اپنی مرضی سے سرد خانوں میں رکھتی یا فرضی قبرستانوں میں ان کے نمبر

کے ساتھ اسلامی طریقے سے آخری رسومات کی ادائی کے بغیر دفن کریتی ہے۔

عبرانی اخبار میں کہا گیا ہے کہ سلوان سے تعلق رکھنے والے شہید نور کو گذشتہ

ہفتے اسرائیلی بارڈر فورس نے گولیاں مار کر شہید کردیا تھا۔ قابض فوج نے

دعویٰ?کیا تھا کہ اس نے فوجیوں پر فائرنگ کی جب کی جوابی کارروائی میں وہ

شہید ہوگیا۔ دوسری طرف شہید فلسطینی کے اہل خانہ نے کہا ہے کہ ان کے بیٹے

کو بغیر کسی غلطی یا جرم کے گولیاں ماری گئیں۔ اس نے نہ تو کسی فوجی

پرحملہ کیا اور نہ ہی اس کا ایسا کوئی ارادہ یا پروگرام تھا۔ اسرائیلی فوج کی جانب

سے تحویل میں لیے گئے 7 فلسطینی دوران حراست دم توڑ چکے ہیں قابض فوج

نے ان فلسطینیوں کے قتل میں ملوث عناصر کے خلاف کوئی کارروائی نہیں کی

اور نہ ہی کسی اسرائیلی عدالت نے اس معاملے کی تحقیقات کی ہیں۔

فلسطینی شہداء جسد خاکی

صدارتی امیدوار جو بائیڈن نے ٹی وی مباحثے میں ٹرمپ کو ’مسخرہ‘ کہہ دیا

قارئین : ہماری کاوش پسند آئے تو شیئر ، اپڈیٹ رہنے کیلئے فالو کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں