Bilawal Bhutto Zardari 39

گلگت بلتستان میں بھٹو شہید کا نامکمل مشن پورا کریں گے، بلاول بھٹوزر داری

Spread the love

نگر(صرف اردو آن لائن نیوز) گلگت بلتستان بھٹو شہید

پاکستان پیپلز پارٹی کے چیئرمین بلاول بھٹو زرداری نے کہاہے کہ 15 نومبر کو

گلگت بلتستان کے انتخابات میں فتح حاصل کرنے کے بعد ذوالفقار علی بھٹو اور

محترمہ بینظیر بھٹو شہید کا مشن پورا کریں گے،سلیکٹڈ حکومت کے دو سال

ہوچکے ہیں، عمران خان نے آپ کیلئے کیا کیا؟ ایک منصوہ بھی گلگت بلتستان

کیلئے نہیں دیا،جو لوگ صوبہ بننے سے قبل گلگت بلتستان کی سبسڈی ختم کریں،

ٹیکس بڑھائیں تو وہ صوبہ بنانے کے بعد کیا کریں گے ،15 نومبر لو گلگت

بلتستان کی جدوجہد کا امتحان کا دن ہے ،پاکستان پیپلز پارٹی ہی گلگت بلتستان کو

حقوق دلوا سکتی ہے، ہم حقوق دینے والے ہیں حقوق چھیننے والے نہیں۔ عوامی

جلسے سے خطاب کرتے ہوئے انہوںنے کہاکہ میں گلگت بلتستان کے ہر حلقے میں

گھوم رہا ہوں اور وہ علاقہ ڈھونڈ رہا ہوں جہاں بھٹو شہید نے قدم نہ رکھا ہو مگر

اب تک مجھے ایسی کوئی جگہ نہیں ملی۔انہوںنے کہاکہ ہمارا 3 نسلوں کا پرانا

رشتہ ہے ہم اسے قائم رکھیں گے اور بھٹو شہید اور بی بی شہید کا نامکمل مشن

پورا کریں گے۔انہوں نے وفاقی حکومت پر تنقید کرتے ہوئے کہا کہ اس سلیکٹڈ

حکومت کے دو سال ہوچکے ہیں، عمران خان نے آپ کیلئے کیا کیا؟ انہوں نے

ایک منصوبہ بھی گلگت بلتستان کے لیے نہیں دیا اور اب کہتے ہیں کہ عبوری

صوبہ بنائیں گے’۔چیئر مین پیپلز پارٹی نے کہا کہ انتخابات سے قبل انہوں نے اس

کی مخالفت کی تھی اور اب انہیں یہ یاد آرہا ہے۔انہوںنے کہاکہ پیپلز پارٹی نے

2018 کے منشور میں کہا تھا کہ گلگت بلتستان کا مطالبہ ہے کہ سینیٹ اور قومی

اسمبلی میں ان کی نمائندگی ہونی چاہیے۔انہوں نے کہا کہ 15 نومبر لو گلگت

بلتستان کی جدوجہد کا امتحان کا دن ہے اور اس دن پیپلز پارٹی کو ووٹ دیں تاکہ ہم

گلگت بلتستان کو اس کا حق دلوا سکیں۔بلاول بھٹو زرداری نے کہا کہ پاکستان پیپلز

پارٹی ہی گلگت بلتستان کو حقوق دلوا سکتی ہے، ہم حقوق دینے والے ہیں حقوق

چھیننے والے نہیں۔انہوںنے کہاکہ جو لوگ صوبہ بننے سے قبل گلگت بلتستان کی

سبسڈی ختم کریں، ٹیکس بڑھائیں تو وہ صوبہ بنانے کے بعد کیا کریں گے۔انہوں

نے کہا کہ پیپلز پارٹی مطالبہ کرے گی کہ جو سبسڈی شہید ذوالفقار علی بھٹو نے

دیا تھا وہ سارے بحال کیے جائیں۔چیئرمین پی پی پی نے کہاکہ ہمارا دوسرا مطالبہ

گلگت بلتستان کی عوام کو اپنی سرزمین کا مالک بنوانا ہے، یہاں کہ نوجوانوں کو

روزگار فراہم کرنا ہے۔انہوںنے کہاکہ پیپلز پارٹی کی تاریخ اس بات کا ثبوت ہے کہ

حکومت میں آکر روزگار پر زور دیتے ہیں جبکہ باقی جماعتوں نے روزگار چھینا

ہے دیا نہیں۔انہوںنے کہاکہ پاکستان پیپلز پارٹی گلگت بلتستان ہی نہیں وفاق میں بھی

حکومت بنائے گی۔انہوں نے گلگت بلتستان کی عوام سے مفت صحت کی سہولیات

قائم کرنے کا وعدہ بھی کیا۔انہوںنے کہاکہ ہمیں صرف حقوق حاصل نہیں کرنے

بالکہ تبدیلی کے نام پر پورے پاکستان میں پھیلی تباہی کو دبانا ہے۔بلاول بھٹو

زرداری نے کہاکہ خدا نخواستہ یہاں بھی کٹھ پتلی حکومت بنی تو نوجوانوں کے

ساتھ یہ کیا کیا کریں گے، پورے پاکستان میں ہر طبقہ احتجاج کر رہا ہے۔انہوں نے

گلگت بلتستان کی مذہبی جماعتوں سے شکوہ کیا کہ گلگت بلتستان کی معزز مذہبی

جماعتیں انصاف اور سچ کے ساتھ نہیں ہیں بلکہ ظلم یہ ہے کہ مولانا فضل الرحمن

کی جماعت تو پیپلز پارٹی کے ساتھ کھڑی ہوسکتی ہے مگر یہ لوگ تحریک

انصاف کے ساتھ کھڑے ہیں۔انہوںنے کہاکہ یہاں کی عوام ان کا ساتھ نہیں دے

سکتے جو غریب عوام سے پنشن چھین رہا ہے، روزگار رکھنے والوں سے

روزگار چھین لے۔انہوںنے کہاکہ ہم نے گلگت بلتستان کے عوام کو تبدیلی کے نام

پر تباہی سے بچانا ہے، ہم ناصرف گلگت بلتستان میں حکومت بنا رہے ہیں بلکہ

وفاق میں بھی حکومت بنائیں گے۔چیئرمین پیپلز پارٹی نے کہا کہ عمران خان کا ہر

وعدہ جھوٹا ہے انہوں نے ایک کروڑ نوکریاں دینے کا وعدہ کیا تھا مگر اسٹیل مل

اور پی ٹی ڈی سی سے ہزاروں ملازمین کو برطرف کیا ،50 لاکھ گھر بنانے کا

وعدہ کیا تھا مگر لاکھوں لوگوں سے گھروں کی چھت چھین لی ،سلیکٹڈ گلگت

بلتستان میں بھی تباہی کرنا چاہتا ہے انہوں نے کہا کہ عمران نیازی تو خود عبوری

وزیراعظم ہیں اور جو عبوری وزیراعظم ہوں وہ کیسے صوبا بنا سکتا ہے .؟انہوں

نے کہا کہ جب آصف علی زرداری نے گلگت بلتستان کو صوبہ کا درجہ دیا تو

عمران نے سپریم کورٹ میں اس کے خلاف سٹیشن دائر کی جو ابھی تک واپس

نہیں لی۔چیئرمین پیپلز پارٹی نے کہا کہ ہم قانون سازی کر کے گلگت بلتستان سے

منتخب نمائندوں کو قومی اسمبلی اور سینیٹ میں بیٹھائیں گے تب تک ہم اسلام آباد

سے پوچھتے رہیں گے کہ گلگت بلتستان کے عوام کو حقوق کیوں نہیں ملے۔

چیئرمین پیپلز پارٹی نے کہا کہ گلگت بلتستان کے عوام کو جو سبسڈی شہید

ذوالفقارعلی بھٹو نے دے تھی اس کو کوئی ختم نہیں کر سکتا،عوامی اجتماع سے

سینیٹر شیری رحمان، سینیٹر مصطفی نواز کھوکھر نگر حلقہ 5 سے پیپلز پارٹی

کے امیدوار مرزا حسین اور پارٹی رہنما محمد علی اختر نے بھی خطاب کیا۔

گلگت بلتستان بھٹو شہید

گلگت بلتستان بھٹو شہید

صدارتی امیدوار جو بائیڈن نے ٹی وی مباحثے میں ٹرمپ کو ’مسخرہ‘ کہہ دیا

قارئین : ہماری کاوش پسند آئے تو شیئر ، اپڈیٹ رہنے کیلئے فالو کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں