38

کورونا وائرس، جرمنی میں دوسرے لاک ڈائون کا آغاز

Spread the love

برلن (صرف اردو آن لائن نیوز) جرمنی لاک ڈائون

جرمنی میں کورونا وائرس کے تیز پھیلا کے باعث دوسرے لاک ڈائون کا پیر کے

روز سے آغاز ہو گیا ہے۔ جرمن اخبار کے مطابق ایک مہینے کے اس لاک ڈائون

سے جرمن معیشت کو انیس ارب سے زائد یورو کا نقصان پہنچے گا۔ سب سے

زیادہ نقصان ہوٹلوں اور ریستورانوں کے کاروبار کو پہنچے گا، جنہیں تقریبا چھ

ارب یورو کا نقصان ہو گا۔ علاوہ ازیں جرمن روزگار کی منڈی پر بھی اثرات

مرتب ہوں گے۔ جرمنی کے علاوہ بیلجیم، فرانس اور پرتگال میں بھی پیر سے

کورونا وائرس کی روک تھام کے لیے سخت پابندیاں نافذ کردی گئیں

ٹرمپ کی سوئنگ ریاست کے ووٹ پر قانونی کارروائی کی دھمکی


ڈونلڈ ٹرمپ نے امریکی انتخابات کے نتائج پر پہلے ہی قانونی کارروائی کی

دھمکی دے دی ہے جبکہ انتخابی رجحانات ظاہر کررہے ہیں کہ امریکی صدر

ڈیموکریٹ امیدوار جو بائیڈن سے پیچھے ہیں۔برطانوی اخبار کی رپورٹ کے

مطابق صحافیوں سے گفتگو کرتے ہوئے ڈونلڈ ٹرمپ نے اس رپورٹ کو مسترد

کردیا کہ وہ ووٹوں کی گنتی کے سرکاری اعداد و شمار موصول ہونے سے قبل

انتخابات کی رات کامیابی کا اعلان کرنے کی تیاری کررہے ہیں۔تاہم انہوں نے

دعوی کیا کہ دو سوئنگ ریاستوں (جہاں ووٹرز کا ملا جلا رجحان پایا جاتا

ہے)نیوڈا اور پینسلوینیا میں ووٹوں کی گنتی میں ممکنہ طور پر ‘فراڈ’ اور ‘غلط

استعمال’ کا امکان ہے، ان دونوں ریاستوں کے موجود گورنرز ڈیموکریٹس ہیں۔

امریکی سپریم کورٹ کے ایک فیصلے کا حوالہ دیتے ہوئے ڈونلڈ ٹرمپ نے کہا کہ

میرے خیال میں یہ خوفناک چیز ہے کہ انتخابات کے بعد بھی بیلٹس اکٹھا کیے

جاسکیں گے مذکورہ فیصلے کے تحت ریاست پینسلوینیا میں انتخابات کے 3 روز

بعد تک بیلٹس کی گنتی کی جاسکتی ہے۔صحافیوں سے بات کرتے ہوئے امریکی

صدر کا کہنا تھا کہ جیسے ہی انتخابات مکمل ہوں گے اسی رات ہم اپنے وکلا سے

رابطہ کریں گے۔شمالی کیرولینا میں صحافیوں سے بات کرتے ہوئے امریکی صدر

کا مزید کہنا تھا کہ میرے خیال میں یہ انصاف نہیں ہے کہ ہمیں انتخابات کے بعد

(کامیابی کے اعلان کے لیے)اتنا طویل انتظار کرنا پڑے

جرمنی لاک ڈائون

صدارتی امیدوار جو بائیڈن نے ٹی وی مباحثے میں ٹرمپ کو ’مسخرہ‘ کہہ دیا

قارئین : ہماری کاوش پسند آئے تو شیئر ، اپڈیٹ رہنے کیلئے فالو کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں