51

بد اخلاقی کے مجرموں کو نامرد بنا دیا جائے ، وزیر اعظم

Spread the love

بد اخلاقی کے مجرم

اسلام آباد(صرف اردو آن لائن نیوز) وزیراعظم عمران خان نے بد اخلاقی کے

مجرم کو مردانہ صلاحیت سے محروم کرنے کی تجویز دیدی اور کہا ایسے

مجرموں کی سرجری کرکے انہیں ناکارہ بنا دینا چاہیے تاکہ وہ کچھ کر ہی نہ

سکیں، بد اخلاقی کرنے والوں کو سرعام پھانسی دینی چاہئے،سانحہ موٹروے نے

پوری قوم کو ہلا دیا، بچوں کے سامنے جو ہوا اس سے صدمہ پہنچا ہے، بد اخلاقی

کرنے والوں کو عبرت ناک سزائیں دی جائیں۔پیر کو نجی ٹی وی چینل کو

خصوصی انٹرویو دیتے ہوئے وزیر اعظم نے کہا سانحہ موٹروے نے پوری قوم کو

ہلا دیا، بچوں کے سامنے جو ہوا اس سے صدمہ پہنچا ہے، بد اخلاقی کرنے والوں

کو عبرت ناک سزائیں دی جائیں۔ اس سے پورے ملک کی عوام کو تکلیف ہوئی

آسٹریلیا کا جلد کورونا ویکسین بنا کر مفت فراہم کرنے کا اعلان

،قصور میں زینب بد اخلاقی کیس اور اس طرح کے دیگر واقعات کے بعد جب آئی

جی کو واقعے کی تفتیش سے متعلق کہا تو آئی جی نے جو رپورٹ پیش کی تو آئی

جی نے بتایا کہ پاکستان میں جنسی جرائم خطرناک حد تک بڑھتے جا رہے ہیں

خواہ وہ بچوں سے متعلق کیسز ہوں یا خواتین سے متعلق، یہ سوسائٹی میں پھیل

چکا ہے ، اس کے بعد ہم نے علماء سے بات کی ،ٹیچرز سے بات کی ، سب کو

بلایا ، بچوں کے ساتھ بد اخلاقی کے واقعات کے خاتمے کیلئے تفصیلی غور کیا ،

یورپ میں جو بچوں سے بد اخلاقی کرتا ہے اس کا پورا ریکارڈ رکھا جاتا ہے لیکن

یہاں پر افسوس سے کہنا پڑتا ہے کہ اس طرح کا کوئی سسٹم موجود نہیں ، بچوں

سے بد اخلاقی کے مجرموں کا پیچھا کیا جائے ۔ بد اخلاقی کے مجرموں کو چوک

پر لٹکانا چاہیے ،سرعام پھانسی دینی چاہیے ، اس طرح کے مجرموں کو جنسی

صلاحیت سے محروم کر دینا چاہیے ، سانحہ گجرپورہ کا ملزم پہلے بھی بد اخلاقی

کر چکا تھا لیکن آزادانہ گھوم رہا تھا اس طرح کے لوگوں کو ہمیشہ کیلئے ختم

کردینا چاہیے ،فحاشی سے معاشرے تباہ ہوجاتے ہیں ، ہمارے پاس فیملی سسٹم ہے

، یورپ اس معاملے پر پاکستان سے پیچھے ہے

بد اخلاقی کے مجرم

قارئین : ہماری کاوش پسند آئے توشیئر ، اپڈیٹ رہنے کیلئے فالو کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں