69

کورونا کیسز کا نیا عالمی ریکارڈ، پھر تیزی آنے والی ہے ،ڈبلیو ایچ او

Spread the love

جنیوا(صرف اردو آن لائن نیوز) کورونا کیسزعالمی ریکارڈ

کورونا وائرس کے نئے روزانہ کیسز کی تعداد کا نیا عالمی ریکارقائم ہو گیاجبکہ

عالمی ادارہ صحت نے نئی لہر کی وارننگ دیدی گذشتہ 24 گھنٹوں میں مختلف

ممالک میں کووڈ 19کے مریضوں کی تعداد میں تین لاکھ سات ہزار نو سو تیس کا

اضافہ ہوا ان میں سے سب سے زیادہ نئے مریض بھارت میں رجسٹر کیے گئے

جس کے بعد دوسرے نمبر پر امریکا اور تیسرے نمبر پر برازیل رہا بھارت میں اب

تک اس وائرس کے متاثرین کی مجموعی تعداد پونے پانچ ملین بنتی ہے یوں اس

وقت یہ جنوبی ایشیائی ملک عالمی سطح پر صرف امریکہ سے پیچھے ہے جہاں

کورونا وائرس کے متاثرین کی تعداد ساڑھے چھ ملین سے تجاوز کر چکی ہے دنیا

بھر میں کورونا وائرس کی وجہ سے ہلاکتوں کی مجموعی تعداد نو لاکھ سترہ ہزار

چار سو سترہ ہو چکی تھی ان میں سے ساڑھے پانچ ہزار سے زائد انسان صرف

کل ایک روز میں انتقال کر گئے عالمی ادارہ صحت کے مطابق اس وقت دنیا کے

58 ممالک ایسے ہیں جہاں کورونا وائرس تیزی سے پھیل رہا ہے کئی ممالک میں

اس وقت اس وائرس کے وبائی پھیلاؤ کی دوسری لہر دیکھنے میں آ رہی ہے مگر

کئی شدید متاثرہ ریاستیں ایسی بھی ہیں جہاں ابھی تک اس وبا ء کی پہلی لہر بھی

اپنی تکمیل کو نہیں پہنچی جن پانچ درجن ممالک میں کووڈ 19کی انفیکشن آج بھی

تیزی سے پھیل رہی ہے ان میں ارجنٹائن، انڈونیشیا، مراکش، اسپین، اور یوکرائن

خاص طور پر نمایاں ہیں عالمی ادارہ صحت (ڈبلیو ایچ او) نے خبردار کیا ہے کہ

کورونا میں پھر تیزی آنے والی ہے یورپ میں اکتوبر اور نومبر میں کورونا

وائرس کے باعث اموات میں اضافہ ہو سکتا ہے یورپ میں ڈبلیو ایچ او کی برانچ

کے سربراہ ہانس کلوج نے کہا کہ یہ ایک ایسا موقع ہے کہ یورپی ممالک ایسی

بری خبر نہیں سننا چاہتے ہانس کلوج نے ان ممالک کو خبردار کیا ہے جو

سمجھتے ہیں کورونا ویکسین کے آنے سے وبا ء ختم ہو جائے گی ’میں یہ ہر وقت

سنتا ہوں کہ ویکسین سے کورونا وائرس ختم ہو جائے گا ایسا بالکل نہیں ہوگا ا

آسٹریلیا کا جلد کورونا ویکسین بنا کر مفت فراہم کرنے کا اعلان

یورپ میں ڈبلیو ایچ او کی برانچ کے سربراہ نے کہا کہ اگر ہمیں مختلف ویکسینز

منگوانی پڑیں تو انہیں یہاں پہنچانے میں بھی مشکل ہوگی دوسری جانب برطانیہ

نے کہا ہے کہ وہ دوا ساز کمپنی والنیوا سے کورونا ویکسین کی 19 کروڑ

خوراکیں خریدے گا جن کی مالیت ایک ارب 30 کروڑ یورو بنتی ہے کمپنی نے

کہا ہے کہ وہ دسمبر میں ویکسین کے ٹرائلز کا آغاز کرے گی اور اگر اس میں

کامیابی ہوئی تو ویکسین 2021 کے وسط کے بعد مہیا ہو سکے گی برطانیہ کو

2021 میں مہیا کی جانے والی چھ کروڑ ویکسینز کی قمیت 470 ملین یورو ہوگی۔

اس کے بعد برطانیہ 2022 میں چار کروڑ اور 2023 سے 2025 تک مزید تین

سے نو کروڑ ویکسینز خریدے گا جس کی قیمت 900 ملین یورو ہوگی۔

کورونا کیسزعالمی ریکارڈ

قارئین : ہماری کاوش پسند آئے توشیئر ، اپڈیٹ رہنے کیلئے فالو کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں