اقوام متحدہ اظہار تشویش 46

بھارت کشمیرمیں جبری گمشدگیوں کا حساب دے ،اقوام متحدہ

Spread the love

بھارت کشمیرمیں

جینوا، جدہ(صرف اردو آن لائن نیوز) اقوام متحدہ کے نمائندوں نے جموں و کشمیر میں بھارت کے

غاصبانہ قبضے کی مذمت کرتے ہوئے عالمی برادری سے بھا ر تی مظالم بند کر ا نے کیلئے فوری

ایکشن کا مطالبہ کر دیا ۔تفصیلات کے مطابق بھارت کی جانب سے کشمیر کی ریاستی خود مختاری

کے خاتمے کا ایک سال مکمل ہونے پر یو این نمائندگان برائے انسانی حقو ق نے بھارت سے بھی

مطالبہ کیا ہے کہ وہ بیگناہ اور معصوم کشمیریوں کو فوری طور پر رہا کرے، مقبوضہ وادی میں

انٹرنیٹ پر عائد پابندیاں ختم کی جائیں اور بھارت 1989ء سے کشمیر میں جاری جبری گمشدگیوں کا

بھی حساب د ے ۔اقوام متحدہ کے نمائندوں کا کہنا تھا مقبوضہ کشمیر میں خفیہ اجتماعی قبروں کے

حوالے سے خبروں کی فوری انکوائری کی جائے اور بھا ر ت ا قو ام متحدہ کے نمائندگان کو

مقبوضہ وادی تک رسائی بھی دے۔ادھراقوام متحدہ میں مستقل مندوب خلیل ہاشمی نے نجی ٹی وی

سے گفتگو کرتے ہو ئے مسئلہ کشمیر پر یو این نما ئند وں کے بیا ن کا خیر مقدم کرتے ہوئے کہا

عالمی برادری کے سامنے بھار ت کا مکروہ چہرہ بے نقاب ہو گیا۔دوسری طرف اسلامی تعاون تنظیم

انتہا پسند نریندر مودی نے رام مندر کا سنگ بنیاد رکھ دیا

(اوآئی سی)کے انسانی حقوق کے مستقل کمیشن نے بھارت کے زیرقبضہ جموں وکشمیر میں انسانی

حقوق کی خلاف ورزیوں، ماورائے ہلاکتوں، جبری لاپتہ کرنے، تشدد اور غیرقانونی قیدوبند کے

واقعات کی تحقیقات کرانے کا مطالبہ کر تے ہوئے 5 اگست یوم استحصال کے موقع پر جاری کردہ

بیان میں کہا ہے کہ کشمیر کے محاصرے کے دن او آئی سی کا انسانی حقوق کمیشن اقوام متحدہ کے

ماہرین کے اس مطالبے کی حما یت کرتا ہے کہ بھارت کے زیرقبضہ جموں وکشمیر میں انسانی

حقوق کی خطرناک صور تحال کے ازالے کیلئے فوری کارروائی کی جائے جو5اگست 2019ء سے

مسلسل خراب تر ہورہی ہے ۔

بھارت کشمیرمیں

اپنا تبصرہ بھیجیں