47

بھارتی موبائل کمپنی ریلائنس جیو نے کشمیریوں کو 553 کروڑ کا چونا لگا دیا

Spread the love

سری نگر(ساوتھ ایشین وائر)(ریلائنس جیو بھارتی موبائل) بھارتی مواصلاتی کمپنی نے

سروسز فراہم کیے بغیر مقبوضہ جموں وکشمیر کے عوام سے 553 کروڑ روپے

کا چونا لگا دیا ہے۔مقبوضہ کشمیر میں ، تیز رفتار موبائل انٹرنیٹ سروس کی معطلی

پی ڈی ایف کتابیں ڈاونلوڈ کرنے کے لیے یہاں کلک کریں

کو سال مکمل ہونے کوہے۔ بھارتی کمپنی ریلائنس جیو نے انٹرنیٹ سروس کی معطلی کے

باوجود صارفین کو بل ادا کرنے پر مجبور کیا۔ساوتھ ایشین وائر کے مطابق ریلائنس جیو

مقبوضہ کشمیر میں 4 جی موبائل انٹرنیٹ سروس فراہم کرنے والا سب سے

بھارت کا ایک اور جھوٹ بے نقاب

بڑا ادارہ ہے۔ ریلائنس جیو نےکشمیر کی خصوصی حیثیت کے خاتمے کے بعد

یعنی5 اگست 2019 سے کشمیریوں سے553 کروڑ روپے کی کمائی کی ہے۔

ریلائنس جیو نے مقبوضہ علاقے میں 30 لاکھ سے زیادہ صارفین کوماہانہ بنیادوں

تقریبا 553 کروڑ روپے کے بل جاری کیے۔ حالانکہ5اگست 2019 کے بعد سے

جموں وکشمیر میں فورجی سروس کومعطل کردیا گیا تھا ، اس طرح صارفین نے

30 جون 2020 تک553 کروڑ روپے کی کمائی کی۔

واضح رہے کہ بھارت میں اس طرح کا کام پہلی بار نہیں کیا بلکہ اس سے قبل بھی

بے شمار بھارتی ادارے ایسے ہیں جو اپنے صارفین کو ان کو مطلوبہ سہولیات فراہم کئے بغیر

ہی ان سے بل وصول کرتے رہتے ہیں یہ شکایت ملک کے دور دراز علاقوں میں عام طور پر رہتی ہے۔

اس کے ساتھ کشمیری عوام کے ساتھ تو یہ سلسلہ سات دھائیوں سے جاری و ساری ہے کہ ان کے نہ تو حقوق دیے جا رہے ہیں اور نہ ہی انہیں بنیادی سہولیات حاصل ہیں

ریلائنس جیو بھارتی موبائل

اپنا تبصرہ بھیجیں

Captcha loading...