india 30

کرونا پھیلاو کا ذمہ دار بھارت ہے، وزیر اعظم

Spread the love

کھٹمنڈو(مانیٹرنگ ڈیسک )(کرونا بھارت وزیر اعظم) نیپال کے وزیراعظم کے پی شرما اولی نے کروناوائرس کے تناظر میں بھارت کو

شدید تنقید کا نشانہ بنایا۔ اپنے ایک بیان میں کے پی شرما اولی کا کہنا تھا کہ بھارت نیپال میں کروناوائرس

پھیلانے کا ذمہ دار ہے، ہمارے ملک میں مہلک وبا بھارت سے منتقل ہوئی۔انہوں نے کہا کہ نیپال میں کرونا

بھارت سے آنے والوں کی وجہ سے پھیلا، بھارت کا وائرس چینی اور اٹلی سے زیادہ خطرناک ہے، تاہم ملک

پی ڈی ایف کتابیں ڈاونلوڈ کرنے کے لیے یہاں کلک کریں

میں وبا کو کنٹرول کرنے کے لیے ہرممکن اقدامات کررہے ہیں۔خیال رہے کہ دنیا بھر کے مقابلے میں نیپال

میں کرونا مریضوں کی متعداد انتہائی کم ہے۔ اب تک مجموعی کیسز کی تعداد 402 ریکارڈ کی گئی، 37

کرونا مریض صحت یاب ہوئے جبکہ 2 افراد کی موت واقع ہوئی۔نیپالی حکومت نے الزام عائد کیا ہے کہ

ہمارے ملک میں وائرس بھارت سے منتقل ہوا ہے۔واضح رہے کہ بھارت میں ایک لاکھ 7 ہزار افراد

کروناوائرس سے متاثر ہیں جبکہ 3 ہزار کے قریب مریض مہلک وبا سے ہلاک ہوئے۔ کرونا سے صحت یاب

ہونے والے مریضوں کی مجموعی تعداد 42 ہزار ریکارڈ کی گئی۔

قومی اورپنجاب اسمبلی کسی بھی وقت تحلیل ہو سکتی ہیں، اعتزازاحسن

دنیا بھر میں جب سے کرونا کی وبا پھیلی ہے امریکہ سمیت اکثر ممالک اپنے ملک میں کرونا کے پھیلنے کی

ذمہ داری دوسروں پر عائد کر رہے ہیں امریکہ کرونا کے پھیلاو کا ذمہ دار چین کو قرار دے رہا ہے اور اس

بات کا اظہار امریکی صدر متعدد بار کر چکے ہیں اسی طرح پاکستانی بھی یہ سمجھتے ہیں کہ کرونا پاکستان

میں انڈیا اور ایران سے آیا ہے۔ اسی بڑے ممالک کی دیکھا دیکھی اب چھوٹے ممالک بھی اپنے ہمسایہ ممالک

پر الزام عائد کر لگ گئے ہیں

کرونا بھارت وزیر اعظم

اپنا تبصرہ بھیجیں