مولانا طارق جمیل نے ڈاکٹروں سے معافی مانگ لی

Spread the love

عدم سہولیات کے باوجود لوگوں کی زندگیاں بچانے والے ڈاکٹر و طبی عملہ عظیم جہاد کر رہے ہیں
شب معراج عجب کیفیت تھی ، سب کے نام ذہن میں تھے ،زبان سے ادانہ ہوپائے، ویڈیو پیغام
لاہور (سٹاف رپورٹر) معروف عالم دین مولانا طارق جمیل کا کہنا ہے وہ شب معراج پر خصوصی دعا میں ڈاکٹر حضرات کا تذکرہ زبان سے نہیں کرپائے جس پر وہ معافی چاہتے ہیں، ڈاکٹرز بہت بڑا جہاد کر رہے ہیں۔اپنے ایک ویڈیو پیغام میں مولانا طارق جمیل کا کہنا تھا شب معراج کی رات کیفیت بنی ہوئی تھی ، سب کے نام ذہن میں تھے لیکن زبان سے ادا نہیں ہوپائے، کچھ دوستوں کے فون آرہے ہیں آپ نے ہمارے شعبے کا ذکر نہیں کیا۔ سینئر صحافی مجیب الرحمان شامی جن کیساتھ میرا بہت محبت کا تعلق ہے ان کا پیغام آیا آپ نے صحافیوں اور اپو ز یشن کیلئے دعا نہیں کی۔مولانا طارق جمیل نے کہا جو لوگ فرنٹ لائن پر ہیں وہ اس وقت بہت بڑا جہاد کر رہے ہیں،

دنیا کے تمام ممالک میں کرونا پھیل گیا، مرنے والوں کی تعداد 22 ہزارسے تجاوز

ان کا کسی بھی سیاسی جما عت کیساتھ رشتہ محض دینی ہے، ان کا کسی سیاسی جماعت سے دوسرا کوئی تعلق نہیں ، ان کو اللہ نے دعوت و تبلیغ کے ذریعے ہدایت دی ہے، تبلیغ ہی ان کا کام اور یہی ان کی جماعت ہے۔مولانا طارق جمیل نے بتایا سہیل بھائی کی طرف سے پیغام آیا ڈاکٹرز گلہ کر رہے ہیں کہ ان کیلئے دعا نہیں کی۔ زبان سے تو الفاظ نہیں نکلے لیکن میرا رواں رواں اس وقت آپ کیلئے دعا کر رہا ہے، لوگوں کا علاج اور بھاگ دوڑ کرنا ساری رات کے نوافل سے بہتر ہے، ہمارے ڈاکٹرز کے پاس چین جیسی سہولیات نہیں ہیں لیکن یہ پھر بھی لوگوں کی زندگیاں بچانے کیلئے کود پڑے ہیں ، یہ اس وقت ویسا ہی جہاد کر رہے ہیں جیسا سرحدوں پر فوجی کرتا ہے، ان کیلئے بہت بڑی جنت ہے۔ ڈاکٹرز کو مخاطب کرکے انکا کہنا تھا آپ کا تذکرہ نہ کرنے پر معذرت خواہ اور سر تسلیم خم ہوں ، معافی چاہتا ہوں ، اس وقت آپ لوگ محسن انسانیت ہیں۔
طارق جمیل

مولانا طارق جمیل معافی

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں