ڈی آئی خان کھانے

ڈی آئی خان میں کھانے پینے کی چیزوں کا مسئلہ نہیں، ڈی سی

Spread the love

ڈیرہ اسماعیل خان (نمائندہ ڈیرہ) ڈپٹی کمشنر ڈیرہ محمد عمیر نے کہا ہے کہ نئے قرنطینہ سنٹر بنانے پر اتفاق ہوا ہے، ہمارے پاس4وینٹی لیٹرموجود ہیں، ڈیرہ میں اشیائے خوردو نوش کا کوئی مسئلہ نہیں ہے۔ ان خیالات کا اظہار انہوں نے میڈیا کو کورونا وائرس کے حوالے سے انتظامات اور اقدامات بارے بریفنگ میں کیا۔

ہمیں ٹوئیٹر پر فالو کرنے کے لیے یہاں کلک کریں

ڈپٹی کمشنر نے کہا کہ گومل میڈیکل کالج ڈیرہ میں صوبے کا سب سے بڑا قرنطینہ سنٹر قائم کیا ہے،گومل میڈیکل کالج اور درازندہ میں قائم قرنطینہ سنٹر سے خیبر میڈیکل کالج لیبارٹری بھجوائے گئے ٹیسٹوں کے نتائج آرہے ہیں۔ اب تک بھجوائے گئے نمونوں میں سے 38مریضوں کے ٹیسٹ مثبت آئے ہیں تاہم کوئی بھی کورونا کا خطرناک مریض ڈیرہ میں داخل نہیں ہوا ہے۔

افغانستان میں گوردوارے پر حملہ،25 افراد ہلاک،8زخمی

انہوں نے بتایا کہ نئے قرنطینہ سنٹر بنانے پر اتفاق ہوا ہے جن میں نئے مجوزہ قرنطائن سنٹرز میں 300بیڈز کا گومل یونیورسٹی کے زیر انتظام وینسم کالج، 100بیڈز رتہ کلاچی کے یوتھ ہاسٹلز اور100بیڈز کا سنٹر گومل یونیورسٹی میں شامل ہے۔ ڈپٹی کمشنر ڈیرہ نے بتایا کہ وزارت داخلہ کی جانب سے بھجوائی گئی۔

تفصیلات کے مطابق ڈیرہ اسماعیل خان میں بیرون ممالک سے 762لوگ آئے ہیں جن کا ڈیٹا پولیس اور دیگر اداروں کو فراہم کرکے ان کی چھان بین کی جارہی ہے۔شہر میں اشیائے خوردونوش کی اشیاء کی صورتحال کے حوالے سے ڈپٹی کمشنر ڈیرہ نے بتایا کہ حکومتی پابندیوں اور ڈیرہ میں ایران سے آنیوالے زائرین کیلئے قرنطائن سنٹر کے قیام کے حوالے سے مقامی افراد نے مقامی لوگوں نے جذبہ خیرسگالی کا مظاہرہ کیاہے۔

شہر میں اشیائے خوردو نوش کا کوئی مسئلہ نہیں ہے، ضلع بھر میں اشیائے خوردو نوش، پھل، سبزیوں اور ادویات اور دودھ وغیرہ کی دوکانیں کھلی ہیں جبکہ سرکاری یوٹیلٹی سٹورز پر اشیائے ضروریہ وافر مقدار میں دستیاب ہیں۔

ڈی آئی خان کھانے ڈی آئی خان کھانے

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں