اجمل وزیر عام تعطیل 228

خیبر پختونخوا: کرونا مریض 31، اجمل وزیر

Spread the love

ہمارا فیس بک پیج لائیک کریں

پشاور(وقائع نگار خصوصی) وزیر اعلیٰ خیبر پختونخوا کے مشیر برائے اطلاعات وتعلقات عامہ اجمل خان وزیر نے کہا ہے کہ خیبر پختونخوا میں مثبت کرونا کیسوں کی تعداد 31 تک جا پہنچی ہے جبکہ صوبہ بھر میں مشتبہ کیسوں کی تعداد 170 ہے۔ نئے مثبت کیسوں میں پانچ کا تعلق مردان سے ہے جو کہ مردان منگاہ میں جاں بحق ہونے والے سعادت خان کے رشتہ دار ہیں ۔2 مثبت کیس پشاور کے ہیں جو کہ پولیس سروسز ہسپتال پشاور میں قرنطینہ کیے گئے ہیں۔

23مارچ صبح 9 بجے سے 7 دن کے لئے صوبہ بھر میں بین الاضلاعی پبلک ٹرانسپورٹ پر مکمل پابندی

ایک کیس ڈیرہ اسماعیل خان میں بھی مثبت آیا ہے جو کہ ضعیف العمر خاتون تھیں جو تفتان سے ڈی آئی خان آتے ہوئے زندگی کی بازی ہار گئی۔ اسی طرح اس میں ٹوٹل 8 کیسوں کا اضافہ ہوا ہے۔وہ پشاور میں کرونا وائرس کے حوالے سے پریس کانفرنس کر رہے تھے۔ اجمل خان وزیر نے کہا کہ کرونا وائرس کے پیش نظر وزیراعلیٰ خیبرپختونخوا محمود خان نے انقلابی اقدامات اٹھائے ہیں اور 1299 ڈاکٹروں کی فوری تعیناتی کے احکامات جاری کیے ہیں ۔

ورونا پھیلانے کا الزام، بے بی ڈول سنگر کانیکا کپور کیخلاف مقدمہ درج

صوبہ بھر میں مشتبہ کیسوں کی تعداد 170 ہے، نئے مثبت کیسوں میں پانچ کا تعلق مردان سے ہے

وسائل کی کمی عوام کی خدمت میں آڑے نہیں آئے گی ہم گھنٹوں کی بنیاد پر صورتحال کا جائزہ لے رہے ہیں اور فوری اقدامات کر رہے ہیں ۔اگر اسلامی نقطہ نظر سے بھی دیکھیں تو گھروں میں خلوت اختیار کرنا، عبادت کرنا، نوافل ادا کرنا اور ملک و قوم کی سلامتی کیلئے دعاؤں کے ذریعے نا صرف اس وبا کے پھیلاؤ کو ترک کیا جاسکتا ہے بلکہ یہ باعث ثواب بھی ہے۔ مشیراطلاعات نے صوبائی حکومت کی طرف سے کئے گئے اقدامات کے حوالے سے کہا کہ حکومت نے 23مارچ صبح 9 بجے سے 7 دن کے لئے صوبہ بھر میں بین الاضلاعی پبلک ٹرانسپورٹ پر مکمل پابندی عائد کی ہے کہ کرونا وائرس کے ممکنہ پھیلاؤ کو رد کیا جا سکے تاہم پرائیویٹ گاڑیاں اور مال بردار گاڑیاں اس سے مستثنیٰ ہوںگی۔

اسی طرح حکومت نے 22 مارچ صبح 9 بجے سے 24 مارچ تک شاپنگ مالز، مارکیٹس اور ریسٹورنٹس وغیرہ بند کرنے کے احکامات بھی جاری کئے ہیں تاہم فارمیسی، کریانہ اسٹورز آٹا چکی،تندور کی دکانیں، دودھ شاپس، آٹو ورکشاپس، پٹرول پمپس گوشت اور چکن کی دکانیں، فروٹ اور سبزی شاپس، اور اشیائے خوردونوش کی منڈیا اس سے مستثنیٰ ہوںگی جبکہ ریسٹورنٹس اور کیفے ٹیریا سے صرف ہوم ڈیلیوری کی اجازت ہوگی۔

وزیراعلیٰ خیبرپختونخوا نے فوری طور پر 1299 ڈاکٹروں کی تعیناتی کے احکامات جاری کیے ہیں

اجمل وزیر نے مزید کہا کہ میں عوام کو یقین دلاتا ہوں کہ یہ آپ کی منتخب کردہ حکومت ہے یہی وجہ ہے کہ وزیراعظم پاکستان نے بار بار لاک ڈاؤن کی مخالفت کی تاکہ عوام کو کم سے کم تکلیف کا سامنا کرنا پڑے میں آج بھی یہ بات وثوق سے کہہ سکتا ہوں کہ اگر عوام حکومت کے احکامات پر عمل کرے تو جو پابندیاں لگائی گئی ہے یہ بھی بتدریج ختم ہوجائیگی۔

اپنا تبصرہ بھیجیں