96

ایس ایس پی عدیل مخفر کیس ڈراپ سین،گرفتار ملزم نے سب راز اگل دئیے

Spread the love

لاہور(جنرل رپورٹر) فرار ملزم ایس ایس پی مفخر عدیل کیس کی تفتیش میں مزید انکشافات ہوئے ہیں، شہباز تتلہ کو قتل کرنے کیلئے ایک ماہ سے پلاننگ کی جا رہی تھی ، مفخر عدیل کا آپریٹر کانسٹیبل عرفان تیزاب اکٹھا کرتا رہا ،جبکہ عرفان بھی مفخر عدیل کے فرار ہونے والے دن سے غائب ہے۔ پولیس نے مفخر عدیل کی دو بیویوں سے دوبارہ تحقیقات شروع کردی ہیں ۔ گرفتار ملزم اسد بھٹی نے اعتراف کیا ہے کہ شہباز تتلہ کو قتل کرنے کی سازش ایک ماہ سے جاری تھی 7فروری کو مفخر عدیل نے شہباز تتلہ کو شراب میں گولیاں ملا کر پلائیں اور بے ہوش ہونے پر منہ پر تکیہ رکھ کر قتل کردیا بعد ازاں لاش کے ٹکڑے کرکے جمع کئے گئے تیزاب میں گلادئیے گئے جس کا تعفن محلے میں پھیل گیاجس پر مفخر نے پولیس ملازمین کو بلوا کر گھر کو پانی سے دھلوا دیاجبکہ تیزاب کا بڑا ڈرم دو چھوٹے ڈرموں میں تقسیم کرکے ڈرم گاڑی میں لوڈ کئے اور روہی نالے میں بہا دئیے گئے ۔ تیزاب کے ایک ڈرم میںشہباز تتلہ کے کپڑے بھی تھے۔ ذرائع کے مطابق پولیس نے گزشتہ روز اسد بھٹی کے بیان کی سیف سٹی کیمروں سے بھی تصدیق کر لی ہے جس میں ایس ایس پی مفخر عدیل کی گاڑی 8فروری کو روہی نالے سے گزرتی دیکھی گئی ہے جبکہ پولیس نے تیزاب کے سیمپل نمونے بھی روہی نالے میں بہا کر دیکھنے کی کوشش کی ہے کہ آیا لاش کی بقایاجات کہاں تک جاسکتی ہیں ۔دوسری جانب مفخر عدیل نے فیصل ٹائون میں کرائے پر لیا گیاپارٹی ہاؤس پراپرٹی ٹیکس نادہندہ نکلا، محکمہ ایکسائز نے 25 فروری تک پراپرٹی ٹیکس جمع نہ کرانے پر مالک مکان کو گرفتار کرنے کا وارننگ نوٹس مرکزی دروازے پر چسپاں کر دیاہے۔مفخر عدیل کیس، تیزاب لانے والاکانسٹیبل بھی کئی روز سے غائب
ایس ایس پی کو مفرور ملزم قرار دیکر دونوں بیویوں کو بھی شامل تفتیش کرلیا گیا
پارٹی ہائوس کرائے کا گھر پراپرٹی ٹیکس نادہندہ نکلا،گرفتاری کا نوٹس چسپاں

اپنا تبصرہ بھیجیں