82

بی جے پی نے اروند کجریوال کو دہشتگرد قراردیدیا

Spread the love

نئی دہلی(مانیٹرنگ ڈیسک) بھارتی دارلحکومت نئی دہلی میں کلین سویپ کرنے والے عام آدمی پارٹی کے سربراہ اور نئی دہلی کے وزیر اعلی ارویند کیجریوال کو بی جے پی کے ایک رکن اسمبلی نے دہشتگردوں کا ہمدرد اور پاک فوج کا ترجمان قرار دیدیا۔بھارتی میڈیا کے مطابق بھارت کی حکمران جماعت بی جے پی کے حال ہی میں منتخب ہونیوالے رکن اسمبلی او پی شرما نے ارویند کیجریوال کو دہشتگرد قرار دیدیا۔دہلی کے وشواس نگر سے الیکشن جیتنے والے او پی شرما نے کہا کہ ارویند کیجریوال ایک کرپٹ آدمی ہے جو دہشت گردوں کے ساتھ ہمدردی رکھتا ہے۔ یہ بھی پڑھیں:بی جے پی وزیر کی بھارت میں مسلمانوں کی نسل کشی کی دھمکی

میڈیا سے گفتگو کرتے ہوئے او پی شرما نے کہا کہ ارویند کیجریوال پاک فوج کا ترجمان ہے جو بھارتی فوج کے کردار پر سوال اٹھاتا اور ٹکڑے ٹکڑے گینگ کو سپورٹ کرتا ہے، اس کیلئے دہشت گرد کا لفظ بالکل ٹھیک ہوگا۔خیال رہے منگل کے روز دہلی کے ریاستی انتخا بات کا نتیجہ آیا ہے جس کے مطابق عام آدمی پارٹی نے کلین سویپ کرتے ہوئے 62 نشستوں پر کامیابی حاصل کی ہے جبکہ بی جے پی کے حصے میں صرف 8 سیٹیں ہی آسکی ہیں۔

یاد رہے کہ

بھارتی ریاست کرناٹکا کے ہندو انتہا پسند وزیر سیاحت سی ٹی روی نے شہریت کے متنازع قانون کے معاملے پر احتجاج کرنے والے مسلمانوں کی نسل کشی کی دھمکی دے دی۔ہندو انتہا پسند جماعت بی جے پی سے تعلق رکھنے والے وزیر سیاحت نے اپنے اشتعال انگیز ویڈیو بیان میں گودھرا میں 2002 میں ہونے والے فسادات کا الزام مسلمانوں پر عائد کرتے ہوئے کہا کہ اس واقعے کا ردعمل سب کو یاد ہونا چاہیے اور اکثریتی کمیونٹی چاہے تو گودھرا جیسی صورتحال دوبارہ پیدا کر سکتے ہیں۔

سی ٹی روی نے بھارت میں شہریت کے متنازع قوانین کے خلاف ہونے والے مظاہروں کو پرتشدد قرار دیتے ہوئے مزید کہا کہ ہم بہت عرصے سے ایسی صورت حال کا سامنا کر رہے ہیں لیکن اب ہم اتنے کمزور نہیں ہیں اور گودھرا واقعے کی طرح سب کو یاد رکھنا چاہیے کہ ہندو کیسے ان واقعات سے نمٹتے ہیں۔

اپنا تبصرہ بھیجیں

Captcha loading...