231

ایران کا عراق میں 2 امریکی اڈوں پر حملہ 80 افراد جاں بحق، پینٹا گون کی تصدیق

Spread the love

کل 22 میزائل داغے گئے، حملہ عین اس وقت کیا گیا جس وقت امریکہ نے جنرل قاسم پر حملہ کیا تھا

حملے کی نگرانی سپریم لیڈر سید علی خامنہ ای امریکہ کے علاقائی اتحادیوں پر حملے کا عندیہ

تہران(ویب ڈیسک) پاسداران انقلاب نے امریکہ کے علاقائی اتحادیوں کو خبردار کر دیا ہے، جو زمین ایران کے خلاف جارحیت کے لیے استعمال کی گئی اس کو ہدف بنائیں گے۔ غیرملکی خبررساں ادارے کے مطابق امریکی ایئربیس پر حملوں کے بعد ایرانی پاسداران انقلاب نے امریکہ کو دھمکی دی کہ اگر وہ جوابی کارروائی کرے گا تو ہم امریکہ کے اندر کارروائی کریں گے۔ اس کے ساتھ پاسداران انقلاب نے متحدہ عرب امارات میں دبئی اور اسرائیل میں حیفہ کو بھی نشانے پر رکھتے ہوئے کہا ہے کہ ان شہروں پر بھی حملہ کر سکتے ہیں۔ پاسداران انقلاب نے امریکہ کے تمام اتحادیوں کو خبردار کرتے ہوئے کہا ہے کہ اگر کسی نے بھی اپنی سرزمین ایران کے خلاف استعمال ہونے کے لیے فراہم کی تو ایران اس کے خلاف کارروائی کرے گا۔

واضح رہے کہ اب سے کچھ دیر قبل مغربی عراق میں امریکی فوج کے ہوائی اڈے پر 35 راکٹ میزائل داغے گئے۔ ایران کے پاسداران انقلاب کا کہنا ہے کہ انہوں نے عراق میں امریکی اڈے پر درجنوں میزائل داغے ہیں۔ ایران نے اس حملے میں 80 افراد کی ہلاکت کا دعوی بھی کیا ہے۔

ایران کے سرکاری میڈیا نے دعویٰ کیا ہےکہ امریکی فوجی اڈوں پر حملے میں 80 افراد ہلاک ہوئے جب کہ امریکی ہیلی کاپٹرز اور فوجی سامان کو شدید نقصان پہنچاہے۔ بھارتی نیوز ایجنسی اے این آئی نے بھی امریکی فوجی اڈوں پر ایرانی حملے میں 80 افراد کی ہلاکت کا دعویٰ کیا ہے۔

امریکی محکمہ دفاع پینٹا گون نے بھی عراق میں امریکی فوج کے اڈے پرحملے کی تصدیق کرتے ہوئے بتایا ہے کہ حملہ مقامی وقت کے مطابق صبح ساڑھے 5 بجے ایران سے کیا گیا جس میں ایران نے عراق میں 2 فوجی اڈوں پر ایک درجن سے زائد میزائل فائر کیے اور عین الاسد اور اربیل میں دو عراقی فوجی اڈوں کو نشانہ بنایا گیا۔ امریکی میڈیا کا دعویٰ ہے کہ امریکی ریڈار دوران پرواز میزائلوں کابروقت پتاچلانے میں کامیاب رہے تھے جس کے باعث امریکی فوجی محفوظ مقام پر منتقل ہوگئے تھے۔ ایرانی میزائل حملوں کے بعد بغداد میں بڑی تعداد میں لڑاکا طیاروں کی پروازیں جاری ہیں۔

امریکی صدر نے حملے کے بعد سب ٹھیک ہے کہ ٹویٹ کرتے ہوئے کہا کہ کہ نقصان کا تخمینہ لگا رہے ہیں

اپنا تبصرہ بھیجیں