145

غرب اردن میں درجنوں ایکڑ فلسطینی زمین پر یہودی بستی کی تعمیر کے لیے قبضہ

Spread the love

بیت لحم (مانیٹرنگ ڈیسک)قابض صیہونی ریاست نے اعلان کیا کہ حکومت بیت لحم میں یہودی آباد کاروں کے لیے 251 رہائشی یونٹ تعمیر کرنے کا منصوبہ تیار کیا ہے۔ قابض صیہونی حکام نے اس منصوبے کے لیے غرب اردن میں درجنوں ایکڑ فلسطینی اراضی غصب کرلی ۔ فلسطین میں یہودی آباد کاروں کے امور پرنظر رکھنے والی فلسطینی کمیٹی نے بتایا کہ اسرائیلی حکام نے بیت لحم کے جنوب میں”گش ایٹیزن ” بستی بلاک میں 146 اور مشرقی علاقے میں ”کیفر الداد”میں 105 یونٹ بنانے کے منصوبے کی منظوری دی ۔ادھر بیت لحم کے جنوب میں نحالین کی درجنوں دونم اراضی”ایلون شووت” کی توسیع لیے قبضہ کیا گیا۔

اپنا تبصرہ بھیجیں