باوردی فورس بنا کر ڈنڈے لہرانے پر ایکشن ہوگا۔ خیبرپختونخواحکومت

Spread the love

بدعنوان عناصراحتساب سے بچنے کے لیے حکومت پر دباؤ ڈالنا چاہتے ہیں

مولانا کو عوام نے مسترد کرکے بد عنوان عناصر کے احتساب کا مینڈیٹ دیا ہے

کسی کو بھی ملکی نظام کو خراب کرنے کی اجازت نہیں دیں گے شوکت یوسفزئی

پشاور(سٹاف رپورٹر)صوبائی وزیر اطلاعات شوکت یوسفزئی نے پشاور میں پریس کانفرنس میں مولانا فضل الرحمن کو تنقید کا نشانہ بناتے ہوئے کہا ہے کہ ‘کسی کو بھی سیاسی مفادات کے لیے خون خرابے کی اجازت نہیں دیں گے، باوردی فورس بنا کر ڈنڈے لہرانے پر ایکشن ہوگا۔ ‘وزیراعظم عمران خان ملک و قوم کی ترقی کے لیے کوشاں ہیں جبکہ مولانا صاحب حکومت کے خلاف بے بنیاد مہم چلانا چاہتے ہیں۔ بدعنوان عناصراحتساب سے بچنے کے لیے حکومت پر دباؤ ڈالنا چاہتے ہیں، مولانا صاحب کو عوام نے مسترد کردیا ہے اور پاکستان تحریک انصاف کو بد عنوان عناصر کے احتساب کا مینڈیٹ دیا ہے۔ ‘کسی کو بھی ملکی نظام کو خراب کرنے کی اجازت نہیں دیں گے، امن وامان برقرار رکھنا حکومت کی ذمہ داری ہے۔

انہوں نے خبردار کیا کہ ‘مولانا فضل الرحمن ریاستی رٹ چیلنج کرنے سے باز رہیں، عمران خان کی کوششوں سے مسئلہ کشمیرعالمی سطح پر اجاگر ہوا، مہنگائی اور مشکل صورتحال کی بات تو ہم بھی کرتے ہیں مگر کسی کو بھی سیاسی مفادات کے لیے خون خرابے کی اجازت نہیں دیں گے۔

انہوں نے کہا کہ ‘باوردی فورس بنا کر ڈنڈے لہرانے پر ایکشن ہوگا اور جے یو آئی کے کارکنوں کے خلاف مقدمے بنیں گے’۔ان کا کہنا تھا کہ ‘ڈنڈا بردار مجمع دکھا کر سیاست نہیں ہوتی، مولانا فضل الرحمن اقتدار کے بغیر مچھلی کی طرح تڑپ رہے ہیں’۔انہوں نے دعوی کیا کہ ‘مولانا فضل الرحمان اداروں کو دھمکیاں دے رہے ہیں اور اس کام میں وہ مدارس کے بچوں کو بھی استعمال کرنا چاہتے ہیں’۔ان کا کہنا تھا کہ ‘مولانا فضل الرحمن جس طرح کی سیاست کرتے ہوئے ہیں وہ کبھی وزیراعظم نہیں بن سکتے

Leave a Reply