93

چمن دھماکہ‘ مولانافضل الرحمان کا آج بلوچستان میں شٹر ڈاون ہڑتال کا اعلان

Spread the love

ہمیں بتائیں کون سی جنگ جیتی اور کہا ں امن قائم ہواہے؟ مولاناحنیف پر ہونے والے دھماکے کی شدید الفاظ میں مذمت کرتے ہیں

علما کرام اور ہر پرامن شہری غیر محفوظ ہوگیا ہے، دھماکوں سے ہمارے حوصلے پست نہیں ہوں گے

اکتوبر میں آزادی مارچ ہوگا، کارکنان پرامن طریقہ سے اسلام آباد کا رخ کریں گے، سربراہ جے یو آئی (ف)

اسلام آباد(نامہ نگار)جمعیت علما اسلام (ف)کے سربراہ مولانا فضل الرحمان نے چمن دھماکے میں پارٹی کے مرکزی ڈپٹی سیکریٹری جنرل مولانا حنیف کی ہلاکت کے بعدآج ( اتوار کو) بلوچستان میں شٹر ڈائون ہڑتال کی کال دے دی۔مولانا فضل الرحمان نے چمن دھماکے پر بیان دیتے ہوئے کہا کہ حکومت کے قیامِ امن کے تمام دعوے دم توڑ گئے ہیں، حکومت کی طرف سے کہا گیا تھا کہ دہشت گردی کے خلاف جنگ جیت لی ہے اور امن قائم ہوگیا ہے، مگر آج کے دھماکے نے ان کے تمام دعووں کا پول کھول دیا ہے، ہمیں بتائیں کون سی جنگ جیتی اور کہا ں امن قائم ہواہے؟

سربراہ جے یو آئی (ف)نے کہا کہ مولاناحنیف پر ہونے والے دھماکے کی شدید الفاظ میں مذمت کرتے ہیں، علما کرام اور ہر پرامن شہری غیر محفوظ ہوگیا ہے۔انہوں نے کہا کہ مولانا محمد حنیف ڈپٹی جنرل سیکریٹری، رکن مجلس عاملہ اور میرے قریبی دوست تھے، مولانا حنیف کے پسماندہ گان کے غم میں برابر کے شریک ہیں۔مولانا فضل الرحمان نے کہا کہ دھماکوں سے ہمارے حوصلے پست نہیں ہوں گے، اکتوبر میں آزادی مارچ ہوگا، کارکنان پرامن طریقہ سے اسلام آباد کا رخ کریں گے۔مولانا فضل الرحمان نے کہا کہ آج ( اتوار کو) صوبہ بھر کے تمام ضلعی ہیڈاکوارٹرز میں پرامن مظاہرے ہوں گے۔واضح رہے کہ چمن میں تاج روڈ پر ہونے والے زور دار دھماکے میں جمعیت علما اسلام (ف)کے صوبائی رہنما مولانا محمد حنیف سمیت 3 افراد جاں بحق ہوگئے۔ دھماکے میں 17 افراد زخمی بھی ہوئے۔

اپنا تبصرہ بھیجیں