114

سڑک پر چلتے پولیس اہلکار کو تھپڑ مارنے والے منچلے گرفتار: عوام کی طرف سے عمدہ چھترول کا مطالبہ

Spread the love

لاہور(بابر بھٹی سے) لاہور کی معروف شاہراہوں پر موٹر سائیکل سواروں کی بدتمیزیاں روز بروز بڑھتی ہی جا رہی ہیں اور قانون نافذ کرنے والے ادارے ان کو روکنے میں ناکام ہو چکے ہیں۔ چھٹی کے دن بند روڈ، رنگ روڈ، فیروز پور روڈ گلبرگ مین بلیوارڈ، ڈیفنس اور دیگر علاقوں میں ون ویلنگ کرنے والے ریسر اکثر اوقات خواتین اور بچوں والی گاڑیوں کو پریشان کرتے ہیں، دو ماہ قبل لاہور رنگ روڈ ساندہ کے قریب ڈولفن اہلکاروں نے ان عناصر کو روکنے کی کوشش کی جس کے نتیجے میں ون ویلنگ کرنے والے گروہ نے مل کر دونوں اہلکاروں کو خوب مارا اور ان کی موٹر سائیکل بھی توڑ ڈالی اور پولیس اہلکاروں کو شدید زخمی حالت میں چھوڑ کر فرار ہونے میں کامیاب ہو گئے

اسی طرح کا ایک واقعہ آج لاہور کی ایک معورف شاہراہ پر پیش آیا جب ایک پولیس اہلکار موٹر پر سوار جا رہا تھا تو پیچھے سے آنے والے موٹر سائیکل سواروں نے اس کے گدی میں تھپڑ مارا، موجود ویڈیو میں دیکھا جا سکتا ہے کہ موٹر سائیکل سوار نے اپنی دوسرے ساتھی کو ویڈیو بنانے کا کہا اور پھر تسلی کے ساتھ جا کر پولیس اہلکار کو تھپڑ مار کر وہاں سے بھاگے لیکن بدقسمتی سے کچھ دور ڈولفن اہلکاروں نے پکڑ لیا گرفتار ہونے والے دو موٹر سائیکل سوار اس وقت پولیس کی حراست میں ہیں ۔

اس موقع پر عوام نے سخت ردِ عمل کا اظہار کرتے ہوئے نمائندہ صرف اردو ڈاٹ کام سے بات چیت کرتے ہوئے کہا کہ ایسے لوگوں کو سخت سزا دینی چاہیے جو ناصرف اپنی زندگی کو خطرے میں ڈالتے ہیں بلکہ دوسروں کے لیے بھی خطرے کا باعث ہیں۔ ایک خاتون نے بتایا کہ ایسے (بڑی سی گالی) ٹولے کی وجہ سے انہیں شدید چوٹیں آئی تھیں جب ایک بار موٹر سائیکل سواروں نے اس کا دوپٹہ کھینچا اور جھٹکا لگنے اور خود کو بچانے کی کوشش میں میں پیچھے سے آنی والی ایک کار نے اسے ٹکر مار دی۔ایک بزرگ نہ کہا کہ ایسے لوگوں کو جہاں وہ یہ حرکتیں کریں وہیں لاکر ان کی روز چھترول کی جائے۔

اپنا تبصرہ بھیجیں