302

پی ٹی سی ایل کی اپ گریڈ کردہ ایکس چینجز میں قابل اعتماد انٹرنیٹ سروسزجاری

Spread the love

اسلام آباد (مہتاب پیر زادہ سے) پاکستان ٹیلی کمیونیکیشن کمپنی لمیٹڈ (پی ٹی سی ایل) اپنے نیٹ ورک ٹرانسفارمیشن پروجیکٹ ( NTP ) کے تحت ٹرانسفارم کئے ہوئے ایکس چینجز میں قابل اعتماد اور تیز رفتار انٹرنیٹ سروسزکی فراہمی کو یقینی بنا رہاہے۔اپ گریڈ ہونے والے ایکس چینجز میں اسلام آباد کی آئی۔10 ایکسچینج، پشاور کی حیات آباد ایکسچینج، لاہور کی مصری شاہ اور بحریہ ٹاؤن ایکسچینج، فیصل آباد کی سرگودھا روڈ اور پی سی ایکس ایکسچینج، ملتان کی گلگشت ایکسچینج اور گوجرانوالہ کی پیپلز کالونی ایکسچینج شامل ہیں۔
ٹرانسفارم کئے گئے ایکس چینجز میں آن گرائونڈ ایکٹیوٹی کے دوران صارفین نے انٹرنیٹ سروسز اور تیز رفتار سپیڈ کے بارے میں معلوم کیا۔ نیٹ ورک ٹرانسفارمیشن پروجیکٹ ( NTP ) کے تحت پی ٹی سی ایل اب اپنے صارفین کو بہتر کئے گئے کاپر نیٹ ورک اور فائبرٹو دی ہوم ( ( FTTH کے ذریعے 8 ایم بی پی ایس سے 50 ایم بی پی ایس تک تیز رفتار کنیکشنز فراہم کرسکتا ہے۔ جن علاقوں میں ایکس چینجز اپ گریڈ کر دی گیئں ہیں وہاں سے مثبت نتائج سامنے آنا شروع ہوچکے ہیںاور صارفین کی جانب سے شکایات میں 40% تک نمایاں کمی آئی ہے ۔

صارفین کی سہولت کے لئے پی ٹی سی ایل کی جانب سے ایکس چینجز سے ملحقہ علاقوں کی نشاندہی کی گئی ۔ان علاقوں میں رہنے والے صارفین اب باآسانی آفیشل ویب سائیٹ کے ذریعے اپنی رہائش سے متعلقہ ایکس چینج کے بارے میں معلوم کرسکتے ہیں۔

محمد انور قذافی ، ایگزیکٹو وائس پریزیڈنٹ، سلیز، پی ٹی سی ایل نے کہا :’’ پی ٹی سی ایل اپنے صارفین کو بہترین انٹرنیٹ سروسز فراہم کرنے کی کوشش کرتا ہے۔ نیٹ ورک ٹرانسفارمیشن پروجیکٹ ( NTP ) سے ہماری کارکردگی میں بہتری اورشکایات کو کم کرنے میں مدد ملی ہے۔اس نئے اور بہتر نیٹ ورک کے ذریعے ہمارے صارفین بغیر کسی رکاوٹ کے بہترین انٹرنیٹ سروسز، تیز رفتار لامحدود انٹرنیٹ اور ڈیٹا اسٹریمنگ سے لطف اندوز ہو رہے ہیں۔ہم پی ٹی سی ایل میں اس بات پر یقین رکھتے ہیں کہ اس جدید ترین ٹیکنالوجی کے ذریعے ہم ڈیجیٹلی کنیکٹڈ پاکستان بنانے میں اپنی ذمہ داری پوری کرسکتے ہیں ۔‘‘
پی ٹی سی ایل کی جانب سے ملک بھر میں 100 منتحب کردہ ایکس چینجز میں سے زیادہ تر ایکس چینجزکو اپ گریڈکر دیا گیاہے۔اس وسیع پروجیکٹ کے ذریعے صارفین تک قابل اعتماد سپیڈ،نیٹ ورک اور تیز انٹرنیٹ کی فراہمی کو یقینی بنایا جا رہا ہے۔

اپنا تبصرہ بھیجیں