80

خطرناک ترین ممالک میں پاکستان سر فہرست،جم میٹس کی ہرزہ رسائی

Spread the love

نیویارک(مانیٹرنگ ڈیسک)سابق امریکی سیکرٹری دفاع جم میٹس نے ہرزہ رسائی کرتے ہوئے کہا ہے خطرناک ترین ممالک میں سر فہرست پاکستان ہے، پاکستان جغرافیائی سیاست کو بھارتی دشمنی کے تناظر میں دیکھتا ہے، افغانستان سمیت دنیا کو بھی پاکستان سے کافی نقصان پہنچا ہے،

پاکستان افغان پالیسی بھی بھارتی دشمنی کو مد نظر رکھتے ہوئے ترتیب دیتا ہے، پاکستان نے افغان طالبان کو پناہ گاہیں فراہم کی ہیں، پا کستان اپنے مفادات کیلئے شدت پسندی کو بھی ہوا دینے سے گریز نہیں کرتا، وزیر اعظم عمران خان کی وائٹ ہائوس میں میزبانی پاک امر یکہ تعلقات کی مسخ شدہ شکل ہے۔

بین الاقوامی میڈیا کے مطابق امریکہ کے سابق سیکرٹری دفاع جم میٹس نے منگل کو نیو یارک میں اپنی کتا ب ’’کال سائن چائوس‘‘ کی تقریب رونمائی میں بات چیت کرتے ہوئے پاکستان کیخلاف ہرزہ رسائی کی اور کہا میں پوری دنیا سے واقفیت رکھتا ہوں، افغانستان سے وینزویلا اور یمن تک خطرناک ترین ممالک میں سر فہرست پاکستان ہے۔میرا کیرئیر مجھے افغانستان لے گیا وہاں بھی اتنے خطرناک حالات نہیں تھے جتنے پاکستان کے تھے۔

القاعدہ سربراہ اسامہ بن لادن کو بھی لمبے عرصے تک پاکستان نے اپنی پناہ میں رکھا ہوا تھا، پاکستان القاعدہ کی مالی امداد میں بھی ملوث پایا گیا،انہوں نے اپنی کتاب میں یہ بھی لکھا ہے کہ سی آئی اے کے سابق قا ئم مقام ڈائریکٹر مائیکل مورل نے گزشتہ سال کہا تھا پاکستان میں جہادی انتہا پسندی مسلسل بڑھ رہی ہے جس وجہ سے وہاں ایک خوفناک معاشرہ تشکیل پا رہا ہے۔

میٹس نے مزید کہا پاکستانی وزیر اعظم عمران خان کی وائٹ ہائوس میں میزبانی پاک امریکہ تعلقات کی مسخ شدہ شکل ہے، ویب سائٹ این پی آر کی خبر کے مطابق ٹرمپ انتظامیہ نے پاکستان پر انحصار کرتے ہوئے افغان طالبان سے مذاکرات افغانستا ن سے انخلا ء کی بات چیت کر رہا ہے لیکن اس قبل ٹرمپ نے جو پاکستان کی لاکھوں ڈالر کی فوجی امداد بند کی اور پاکستان پر دبائو کیلئے دہشتگرد و ں کو پناہ دینے کا الزام عائد کیا اس سے باہمی تعلقات مزید خراب ہو ئے اسلئے امریکہ کو پاکستان سے معاملات طے کرنے کیلئے انتہائی سوچ بچار کرنا ہو گا ۔

اپنا تبصرہ بھیجیں