159

محرم الحرام کے حوالے سے علماء کرام کااجلاس وفاقی وزیر مذہبی امور ڈاکٹر نور الحق قادری کی زیر صدارت منعقد ہوا

Spread the love

اسلام آباد(مہتاب پیر زادہ سے) وزارت مذہبی امور و بین المذاہب ہم آہنگی ، اسلام آباد کے کمیٹی روم میں اسلام آباد /راولپنڈی کے مختلف مسالک سے تعلق رکھنے والے ممتاز علماء کرام و مشائخ عظام، خطباء و مذہبی شخصیات کا نمائندہ اجلاس محرم الحرام 1441 ھ کے حوالے سے وفاقی وزیر مذہبی امور جناب ڈاکٹر نور الحق قادری صاحب کی زیر صدارت منعقد ہوا۔ اس اجلاس میں اس امر پر غور کیا گیا کہ کس طرح محرم الحرام کے مہینے میں امن و امان کی صورتحال کو خراب ہونے سے بچایا جائے۔ اس سلسلے میں علماء کرام اور مشائخ عظام ایک جامع ضابطہ اخلاق پر متفق ہوئے جس کے مندرجات حسب ذیل ہیں:
o تمام مکاتب فکراپنے درمیان محبت، رواداری اور افہام و تفہیم کی فضا قائم کر نیکی خلوص دل سے کو شش کریں گے۔
o دوسرے مسالک کے اکابرین کا احترام کریں گے۔
o علماء کرام خطباء اور مصنفین اپنی تقریروں اور تحریروں میں توازن و اعتدال پیدا کریں اور ایسے اشتعال انگیز بیانات اور تحریروں سے پر ہیز کریں گے جن سے دوسروں کی دل آزاری ہو سکتی ہو۔
o مسلکی تنازعات کو باہم مشاورت، افہام و تفیہم اور سنجیدہ مکا لمے کے اصولوں کی روشنی میں طے کریں گے۔
o عوامی پلیٹ فارم سے اپنے مخالفین کے خلاف طعن و تشنیع سے مکمل اجتناب کیا جائیگا۔
o امہات المومنین، صحابہ کرام، اہل بیت اطہار اور او لیا ئے کرام، تابعین وتبع تا بعین اور تمام اکابرین امت کے ادب و احترام ملحوظ نظر رکھا جائیگا اور ان میں سے کسی کو بھی تنقید کا نشانہ نہیں بنایا جائے گا۔
o قومی، ملی اور ملکی حالات و معاملات میں تمام مکاتب فکر کے علمائے کرام متفق و متحد رہیں گے۔
o علماء کرام اور خطباء واقعہ کربلا کے تناظر میں کشمیریوں کی قربانیوں کا بھی ذکر کریں۔ ان سے اظہار یکجہتی کے ساتھ ساتھ اور ان پر ہونے والے ظلم وجبر کو دنیا تک پہنچائیں۔
o وفاقی حکومت نے صوبائی حکومتوں سے بھی اپیل کی ہے کہ اس طرح کے اجلاس صوبائی اور ضلعی سطح پر بھی منعقد کئے جائیں تاکہ پورے ملک میں محرم الحرام کے دوران بین المسالک ہم آہنگی کی فضا بر قرار رہے۔

اپنا تبصرہ بھیجیں