134

پنجاب میں پلاسٹک بیگز پر پابندی کا قانون جلد نافذ ہو گا

Spread the love

’’پلانٹ فار پاکستان‘‘شجرکاری مہم گیم چینجر ثابت ہو گی،عثمان بزدار

ہر ضلع میں ایک سڑک اور ڈویژن میں پارک کو کشمیر کے نام سے منسوب کرنے کے اعلان پر جلد عملدرآمد شروع ہو جائیگا

4 سال میں جنگلات کے رقبے میں اضافہ کرینگے، 42 کروڑ پودے لگائینگے، شجر کاری مہم کی افتتاحی تقریب سے خطاب

مانگا منڈی (نمائندہ خصوصی ) وزیراعلیٰ پنجاب سردار عثمان بزدار نے مانگا منڈی کے علاقے خود پور میں پلانٹ فار پاکستان ڈے کے موقع پر ’’ہر بشر 2 شجر‘‘ کے تحت پودا لگا کر مون سون شجرکاری مہم 2019 کاافتتاح کیا۔

وزیر مملکت برائے ماحولیاتی تبدیلی زرتاج گل، وزیراعظم کے مشیر برائے ماحولیاتی تبدیلی ملک امین اسلم، وفاقی پارلیمانی سیکرٹری ماحولیاتی تبدیلی رخسانہ نوید اور سکائوٹس نے بھی پودے لگائے اور شجرکاری مہم کی کامیابی کیلئے دعا کی گئی۔ وزیراعلیٰ عثمان بزدار اور دیگر مہمانوں نے پی ایچ اے اور محکمہ جنگلات کے سٹالز کا دورہ کیا۔

بعدازاں شجرکاری مہم 2019 کی تقریب سے خطاب کرتے ہوئے وزیراعلیٰ نے خود پور میں شجرکاری کیلئے مختص مقام کو کشمیر پارک سے منسوب کرنے کا اعلان کیا اور کہا کہ خود پور میں شجرکاری کیلئے واگزار کرائی گئی 50 ایکڑ سرکاری اراضی کو کشمیری بہن بھائیوں کے نام کرتا ہوں۔

صوبہ کے ہر ضلع میں ایک سڑک اور ہر ڈویژن میں ایک پارک کو کشمیر کے نام سے منسوب کرنے کے اعلان پر جلد عملدرآمد شروع ہو جائے گا۔

ہم بھارتی ظلم و ستم کا نشانہ بننے والے کشمیری عوام سے مکمل یکجہتی کا اظہار کرتے ہیں۔ عثمان بزدار نے کہا کہ پولی تھن فری پنجاب کا قانون جلد نافذ ہو جائے گا۔

پنجاب میں پلاسٹک بیگز پر پابندی عائد کی جائے گی۔ پنجاب حکومت نے پولی تھن بیگز کے استعمال پر پابندی کی سمری منظوری کر لی ہے اور کابینہ کے اگلے اجلاس میں اس فیصلے کی منظوری کے بعد عملدرآمد ہوگا۔

وزیراعلیٰ نے خطاب کرتے ہوئے مزید کہا کہ 4 سال میں جنگلات کے رقبے میں اضافے کا ہدف پورا کریں گے۔ بلین ٹری پراجیکٹ پاکستان کی ماحولیاتی تاریخ میں گیم چینجر ثابت ہوگا۔ شجرکاری پاکستان تحریک انصاف کی حکومت کی ترجیحات میں سرفہرست ہے۔ حکومت اور سول سوسائٹی شجرکاری کو بے حد اہمیت دیتی ہیں۔

بلین ٹری سونامی پراجیکٹ پاک سر زمین کو سرسبز و شاداب بنانے کیلئے شروع کیا گیا ہے۔ پنجاب میں جنگلات کے تحفظ اور شجرکاری کیلئے اربوں روپے مختص کئے گئے ہیں۔ 4 سال میں ملکی تاریخ میں ریکارڈ ساز 42 کروڑ پودے لگائے جائیں گے۔صوبہ پنجاب میں سرکاری و نجی اور محکمہ دفاع کی اراضی پر بھی پودے لگائے جائیں گے۔ تجاوزات کے خلاف مہم میں ہزاروں ایکڑ اراضی واگزار کرا کر قبضہ سرکاری اداروں کو دیا جا رہا ہے۔

خود پور میں 50 ایکڑ اراضی قابضین سے لے کر شجرکاری کی جا رہی ہے۔سرکاری اراضی کا شجرکاری سے بہتر کوئی استعمال نہیں ہو سکتا۔ شجرکاری کے عمل میں طلبہ اور دیگر مکاتب فکر کو شامل کیا جا رہا ہے۔ درخت ہمارے دوست ہیں جو ہمیشہ وفا کرتے ہیں۔ درختوں سے صرف نگہداشت کرنے والے ہی نہیں بلکہ دوسرے بھی مستفید ہوتے ہیں۔

اپنا تبصرہ بھیجیں