شاہد خاقان عباسی کے خلاف وعدہ معاف گواہ تیار

Spread the love

مبین صولت کا نام ای سی ایل سے نکالنے کے لیے مئی 2019 سے کوشش کی جارہی تھی اس سلسلہ میں دفتری سطح پر کورٹ میں درخواست دائر کی گئی تھی۔ اس کے ساتھ یہ بھی امید کی جار رہی تھی کہ ایران کے دورے پر عمران خان ان کو اپنے ساتھ لے کر جائیں گے جہاں گیس کے معاملات پر اہم بات چیت ہونا تھی

مبین صولت کا شمار سابق وزیراعظم کے قریبی افسروں میں ہوتا تھا، انہوں نے ہی قطر میں ایل این جی کی حصول کیلئے مذاکرات کئے

اسلام آباد(مانیٹرنگ ڈیسک) سابق وزیراعظم شاہد خاقان عباسی کیخلاف وزارت پٹرولیم کے ایک اور بڑے افسر مبین صولت وعدہ معاف گواہ بننے کیلئے تیار ہو گئے ہیں، مبین صولت خاقان عباسی دور میں انٹر سٹیٹ گیس کمپنی کے ایم ڈی تھے اور ایل این جی درآمد میں ان کا کردار بڑا اہمیت کا حامل تھا کیونکہ موصوف نے ہی قطر میں ایل این جی کی حصول بارے مذاکرات کئے تھے اور شاہد خاقان عباسی کے انتہائی قریبی افسران میں ان کا شمار ہوتا تھا۔

نیب ذرائع نے بتایا ہے کہ مبین صولت نے سلطانی گواہ بنے پر راضی ہو گئے ہیں اور خاقان عباسی کی کرپشن سے پردہ چاک کرنے کے بھی تیار ہیں، ذرائع نے بتایا کہ سابق وفاقی سیکرٹری عابد سعید کے بعد مبین صولت کا سلطانی گواہ بننے کے بعد پراسیکیوشن افسران کا کام مکمل ہو گیا ہے، خاقان عباسی نے ایل این جی آمدن سے اربوں روپے کی کرپشن کا الزام کا سامنا کر رہے ہیں، اور اب تک نیب کی حراست میں ہیں وعدہ گواہ کی درخواست منظور ہونے کے بعد مبین صولت اہم دستاویزات نیب حکام کے حوالے کریں گے۔

Please follow and like us:

Leave a Reply