ورلڈکپ فخر زمان کے لیے ڈرائونا خواب ثابت ہوا، 8 میچز میں 186 رنزبنا سکے

Spread the love

بابر اعظم کے 474 رنز،بولرزمیں عامر17 شاہین 16 شکارکرنے میں کامیاب رہے

لندن (مانیٹرنگ ڈیسک) ورلڈکپ پاکستانی اوپنرفخر زمان کیلئے ڈرائونا خواب ثابت ہوا جب کہ وہ 8 میچز میں محض 186 رنز ہی بنا سکے۔سیمی فائنل میں جگہ نہ بنا پانے والی پاکستانی ٹیم کو ورلڈکپ میں اوپنر فخر زمان سے بیحد امیدیں تھیں مگر وہ ان پر پورا نہ اتر پائے، بائیں ہاتھ سے کھیلنے والے نے 8 میچز میں 23.25 کی معمولی اوسط سے محض 186 رنز بنائے،اس میں صرف ایک ہی نصف سنچری شامل تھی، دوسرے اوپنر امام الحق بھی بیشتر میچز میں ناکام رہے مگر بنگلادیش سے غیراہم مقابلے میں سنچری سے انھوں نے اپنے انفرادی اعدادوشمار کچھ بہتر بنا لیے۔

امام نے 38.12 کی اوسط سے 305 رنز اسکور کیے، بابر اعظم نے67.71 کی ایوریج سے سب سے زیادہ 474 رنز بنائے، اس میں ایک سنچری اور 3 نصف سنچری شامل رہیں، محمد حفیظ نے 253 اور حارث سہیل نے 198 رنز اسکور کیے،عماد وسیم 162 رنز بنانے میں کامیاب رہے، سرفراز احمد 28.60 کی اوسط سے 143 رنز ہی بنا سکے، شعیب ملک 3میچ میں8 اور آصف علی 2 مواقع ملنے پر 19 رنز تک محدود رہے۔

بولنگ میں محمد عامر نے 8 میچز میں سب سے زیادہ 17 کھلاڑیوں کو21.05 کی اوسط سے آئوٹ کیا،شاہین شاہ آفریدی نے صرف5 مقابلوں میں14.62 کی ایوریج سے 16 وکٹیں لیں، وہاب ریاض نے11 شکارکیے، شاداب خان 9 وکٹیں لینے میں کامیاب رہے، حسن علی کو 4 میچز میں محض 2 وکٹیں ملیں۔

Please follow and like us:

Leave a Reply