3 جولائی کے واقعات ایک نظر میں

Spread the love

واقعات

1905ء ہڑتال کے دوران احکامات بحال کرنے پر روسی فوج نے تقریباً چھ ہزار لوگوں کو ہلاک کر دیا

1940ء جنگ عظیم دوم: برطانوی جنگی جہازوں نے فرانسیسی جہازوں کے بیڑے کو تباہ کر دیا ہزار سے زیادہ فرانسیسی ہلاک

1962ء فرانس کیخلاف الجیریا کی جنگ آزادی کا اختتام ہوا

1962ء پاکستان کی قومی اسمبلی نے تمام قوانین قرآن و سنت کے مطابق بنانے کی قرارداد منظور کر لی

1986ء کویت میں قومی اسمبلی تحلیل کردی گئی

2003ء اٹلی نے غیر قانونی طور پر مقیم 119پاکستانی بے دخل کردیے

2007ء جامعہ حفصہ پر پولیس اور رینجرز کا مشترکہ آپریشن جس میں کم از کم 10 افراد ہلاک ہو گئے۔

ولادت

1883ء فرانز کافکا، بیسویں صدی کے بہترین ناول نگاروں میں سے ایک ہیں۔ ان کی خدمات کا اعتراف ان کی وفات کے بعد دنیا کے بہترین ادیب کے طور پر کیا گیا۔ ان کا انتقال 3 جولائی 1883ء – کو ہوا۔

1946ء جونی لی، امریکی گلوکار

1949ء بو شیلائی، چین کے سابق سیاستدان تھے۔ ان پر رشوت لینے، خوردبرد اور اختیارات کے غلط استعمال کے الزامات ثابت ہونے پر انہیں عمر قید کی سزاسنائی گئی۔

1951ء رچرڈ ہیڈلی، نیوزی لینڈر کرکٹ کھلاڑی

1952ء پاکستان کے کرکٹ کے سابق کھلاڑی۔ مشہور کھلاڑی رمیز راجہ کے بھائی۔ وسیم راجا دائیں ہاتھ سے گیند کرنے والے لیگ سپن بالر تھے جنہوں نے ٹیسٹ کرکٹ میں اکاون کھلاڑیوں کو آؤٹ کیا۔ وہ گگلی بھی پھینکتے تھے اور بائیں ہاتھ سے جارحانہ بیٹنگ کرنے والے مڈل آڈر بلے باز تھے۔ انہوں نے کئی موقعوں پر پاکستان کی طرف سے اننگز کا آغاز یا اوپننگ بھی کی۔ 23 اگست 2006ء میں ایک کاونٹی میچ کے دوران میں سلپ میں کھڑے ساتھی فیلڈروں کو بتایا کہ ان کو چکر آ رہے ہیں اور میدان سے باہر جانا چاہتے ہیں۔ انہیں جب میدان سے باہر لے جایا جا رہا تھا تو وہ باونڈری لائن پر انتقال کر گئے۔

1959ء ڈیوڈ شور، کینیڈین مصنف

1962ء ٹام کروز 3 جولائی 1962 کو پیدا ہوئے۔ وہ ایک معروف ہالی وڈ اداکار ہیں ان کی معروف فلموں میں ٹاپ گن، نائیٹ اینڈ ڈے، مشن امپوسبل سیریز کی چار فلمیں شامل ہیں۔ حال ہی میں ان کے راک آف ایجز میں ادا کیے گئے منفرد کردار کو ناقدین نے پسند کیا۔

1971ء جولین اسانژ، وکی لیکس کے بانی۔ 1971 کو آسٹریلیا میں پیدا ہوئے۔ کم عمری ہی میں ہیکنگ کے جرم میں پولیس کو مطلوب رہے۔ مگر انہیں بین الاقوامی طور پر شہرت وکی لیکس کی بدولت حاصل ہوئی۔

وفات

1918ء محمد خامس 31 اگست 1876ء سے 27 اپریل 1909ء تک خلافت عثمانیہ کی باگ ڈور سنبھالنے والا سلطان تھے۔ وہ سلطنت عثمانیہ کے 35ویں فرمانروا تھے۔ وہ 2 یا 3 نومبر 1844ء کو توپ کاپی محل استنبول میں پیدا ہوئے اور 73 برس کی عمر میں 3 یا 4 جولائی 1918ء کو فوت ہوئے۔ وہ سلطان عبدالمجید اول کے بیٹے تھے۔ ان کو والدہ کا نام صوفیہ تھا۔

1929ء شمس العلما مرزا قلیچ بیگ سندھ سے تعلق رکھنے والے انیسویں صدی کے مشہور و معروف عالم، صاحبِ دیوان شاعر، ماہرِ لسانیات، ماہرِ لطیفیات، مورخ، مترجم، ناول نگار اور ڈراما نویس تھے۔ انہوں نے آٹھ مختلف زبانوں میں تقریباً 457 کتابیں تصنیف، تالیف و ترجمہ کیں، ان میں عربی، بلوچی، انگریزی، فارسی، سندھی، سرائیکی، ترکی اور اردو زبانیں شامل ہیں۔ وہ 4 اکتوبر،1853ء کو پیدا ہوئے۔

1979ء لوک گلوکار عالم لوہار

2004ء پاکستانی ڈرامہ اداکار حسام قاضی

2011ء علی بحر، بحرینی گلوکار، موسیقار (پیدائیش: 1960ء)

Please follow and like us:

Leave a Reply