105

مدارس پر بلاجواز چھاپوں کا سلسلہ بند ورنہ مزاحمت کرینگے،وفاق المدارس

Spread the love

لال مسجد اور جامعہ حفصہ کا محاصرہ ختم ،بچیوں تک کھانا پہنچایا،دارالافتا لال مسجد کو بحال کیا جائے

چھاپے بند نہ ہوئے تو مرکزی قیادت،اتحاد تنظیمات ، دینی سیاسی جماعتیں اپنا لائحہ عمل دیں گی
اسلام آباد (مانیٹرنگ ڈیسک )دینی مدارس پر بلاجواز چھاپوں کا سلسلہ بند کیا جائے،آئندہ چھاپہ مارا گیا تو مزاحمت کی نوبت بھی آ سکتی ہے،لال مسجد کا محاصرہ ختم ،بچیوں تک کھانا پہنچایا،دارالافتا لال مسجد کو بحال کیا جائے،مدارس کو احتجاج پر مجبور نہ کیا جائے،مدارس پر چھاپوں کے حوالے سے مرکزی قیادت،اتحاد تنظیمات اور دینی سیاسی جماعتوں کی مشاورت سے جلد متفقہ لائحہ عمل کا اعلان کیا جائے گا۔

ان خیالا ت کا اظہار وفاق المدارس،جمعیت اہلسنت،جمعیت علما اسلام،اہلسنت و الجماعت اور دیگرجماعتوں کے رہنمائوں،مدارس کے ذمہ دارا ن اور مساجد کے ائمہ وخطبا نے دارالعلوم اسلام آباد میں منعقدہ ہنگامی اجلاس سے خطاب کرتے ہوئے کیا۔ امیرجمعیت اہلسنت مولانا اشرف علی کی صدارت میں منعقدہ اجلاس سے وفاق المدارس اسلام آباد کے مسوول مولانا ظہور احمد علوی، مولانا مفتی عبدالسلام، مولانا عبدالقدوس محمدی، مولانا قاری سہیل عباسی، مولانا مفتی دوست محمد،رئیس دارالافتا لال مسجد مولانا مفتی امیر زیب،مولانا مفتی احسان الحق، مولانا یاسر اقبال سمیت بڑی تعداد میں علما کرام نے اسلام آباد کے دینی مدارس پر مسلسل چھاپوں اور مدارس مخالف مہم پر شدید غم و غصے کا اظہار کرتے ہوئے ان واقعات کی سخت الفاظ میں مذمت کی۔

علما کرام نے اپنے دیرینہ موقف کا اعادہ کیا کہ ہم نے ہمیشہ ملکی سلامتی اور امن وامان کیلئے اداروں سے تعاون کیا لیکن یہ توہین آمیز انداز کسی طور پر قابل قبول نہیں، بلاجواز چھاپے مار کر مدارس کو مشکوک بنایا جا رہا ہے، خدشہ ہے یہ سلسلہ نہ رکا تو خدانخواستہ مزاحمت کی نوبت بھی آسکتی ہے۔

علما کرام نے مطالبہ کیا لال مسجد اور جامعہ حفصہ کا محاصرہ ختم کیا ،بچیوں تک کھانا پہنچانے کی اجازت دی جائے ۔اجلاس کے شرکا نے خبردار کیا مدارس کیخلاف مہم جوئی کے ذریعے سے اہل مدارس کو سڑکوں پر نکلنے پر مجبور نہ کیا جائے۔وفاق المدارس کی مرکزی قیادت،مذہبی سیاسی جماعتوں اور اتحاد تنظیمات مدارس سے مشاورت کے بعد آئندہ کے لائحہ عمل کا اعلان کیا جائے گا۔

اپنا تبصرہ بھیجیں