14 جون کے واقعات ایک نظر میں

Spread the love

واقعات

1826ء سلطنت عثمانیہ میں ینی چری کے دستوں کی بغاوت کا آغاز۔ یہی بغاوت ان کے خاتمے کا باعث بنی۔

1907ء ناروے میں خواتین کے ووٹ کاسٹ پر پابندی عائد کردی گئی

1937ء لینا میڈیناپانچ سال کی عمر میں دنیا کی کم عمر ترین ماں بنی

1940ء نیدر لینڈز نے جرمنی کے آگے ہتھیار ڈال دیے

1953ء لاہور سے مارشل لا اٹھالیا گیا

1955ء کمیونسٹ ریاستوں نے وارسا معاہدہ پر دستخط کیے

1956ء پاکستان کے وزیر اعظم چوہدری محمد علی نے پہلے پانچ سالہ ترقیاتی منصوبے کا اعلان کیا

1973ء امریکا نے خلائی اسٹیشن اسکائی لیب ون خلا ء میں روانہ کیا

2002ء کراچی میں امریکی سفارتخانے کے سامنے کار بم دھماکے میں بارہ افراد ہلاک اور پچاس زخمی ہوئے

ولادت

1856ء – احمد رضا خان، برصغیر کے نامور مترجم قرآن، فقیہ و نعت گو شاعر

1907ء ایوب خان پاکستان کے جنرل و سابق صدر

1917ء جنوبی کوریا کے سابق صدر۔ ٹیگو میں پیدا ہوئے۔ اس وقت کوریا پر جاپان قابض تھا۔ ٹیگو نارمل سکول میں تعلیم پائی۔ 1937ء میں پرائمری ٹیچر مقرر ہوئے۔ دوسری جنگ عظیم کے دوران جاپانی فوج میں بھرتی ہو گئے۔ 1947ء میں کورین کنسٹبلری میں کپٹن کے عہدے پرفائز ہوئے۔ 1948ء میں کمیونسٹ بغاوت جس کی قیادت کوریائی فوج کے چند افسر کر رہے تھے۔ میں ملوث ہونے کے پاداش میں انھیں سزا ئے موت سنائی گئی۔ انھوں نے چوتی کے کمیونسٹ لیڈروں کی فہرست حکام کے حوالے کردی جس پر انھیں معافی دے کر، سابقہ عہدے پر بحال کر دیا گیا۔ اس کے بعد انھوں نے بڑی برق رفتاری سے ترقی کی۔ 1953ء میں بریگیڈیر بنا دیے گئے۔ اور 16 مئی 1961ء میں فوج بغاوت کے ذریعے حکومت پر قبضہ کر لیا۔ 1963ء میں صدارتی انتخابات میں صدر چنے گئے۔ 1969ء میں ترمیم شدہ آئین کے تحت دو بار صدر منتخب ہوئے۔ 1972ء میں نیا آئین نافذ کیا جس کی رو سے تا حیات صدر بن گئے۔ اکتوبر 1979ء میں خفیہ پولیس کے سربراہ نے گولی مار کر ہلاک کر دیا۔

1924ء جیمز بلیک ایک اسکاچستانی ادویات دان تھے جنھوں نے 1988ء کا نوبل انعام حاصل کیا تھا۔ ان کا انتقال 21 مارچ 2010ء کو ہوا۔

1928ء چی گویرا ارجنٹائن کا انقلابی لیڈر تھا۔ چی عرفیت ہے۔ وہ 14 مئی، 1928ء کو ارجنٹائن میں پیدا ہوا۔ بچپن سے دمہ کا مریض ہونے کے باوجود وہ ایک بہترین ایتھلیٹ تھا اور شطرنج کا بھی شوقین تھا۔ اپنی نوجوانی میں وہ کتابوں کا بہت زیادہ شوقین تھا، اس کی خوش قسمتی تھی کہ اس کے گھر میں 3000 سے زائد کتابوں پر مشتمل ذخیرہ موجود تھا، جس سے اس نے اپنے علم میں بہتر اضافہ کیا۔

1946ء ڈونلڈ ٹرمپ امریکہ کی ایک کاروباری شخصیت جو سنہ 2016ء کے امریکی صدارتی انتخابات کے نتیجہ میں ریاستہائے متحدہ کے پینتالیسویں صدر منتخب ہوئے۔ ٹرمپ کو سب سے زیادہ شہرت امریکی صدارتی امیدوار کے طور پر ملی اور اپنی انتخابی مہم میں ٹرمپ ایک مسلم دشمن سیاست دان کے روپ میں سامنے آئے۔

1960ء عمران فاروق ایک پاکستانی سیاست دان،شاعر اور ڈاکٹر تھے، آپ کا تعلق متحدہ قومی موومنٹ سے تھا، اس جماعت کے بانی ارکان میں سے ایک تھے۔1992 سے ہی لندن چلے گئے اور وہاں 18 سال گزارے حتیٰ 2010 میں ان کو بے دردی سے قتل کیا گیا۔

1974ء شرجیل میمن، پاکستانی سیاستدان جن کا تعلق پاکستان پیپلز پارٹی سے ہے، ان کا شمار ان سیاستدانوں میں ہوتا ہے جن کا نام پاکستان میں بھرپور کرپشن کرنے والوں میں آیا اور ان کو آج کل کیسوں کا سامنا ہے۔ یہ وہی ہستی ہیں جن کو گرفتار کیا گیا تو ان پر بیماری نے حملہ کر دیا اور ان کو مجبوراً ہسپتال منتقل کیا گیا۔ ہسپتال میں ایک روز اس وقت کے منصف اعظم ثاقب نثار اچانک پہنچے تو ان کے وارڈ سے شراب کی بوتلیں برآمد ہوئیں جن کو منصف اعظم نے اپنے ہاتھ سے پولیس کے حوالے کیا تاکہ اس کا لیبارٹری ٹیسٹ کیا جائے، مگر پولیس کے ہاتھ لگتے ہی اس میں ایسی برکت ہوئی کہ لیب پہنچنے پر معجزاتی طور پر شراب کی یہ بوتلیں شہد میں تبدیل ہو گئیں اور منصف اعظم نے اس معجزہ کو بہت عقیدت سے ساتھ تسلیم کیا اور اس بارے میں دوبارہ کسی سے باز پرس نہیں کی۔

وفات

1200ء ابو الفرج عبد الرحمٰن بن ابو الحسن علی بن محمد بن علی بن عبید اللہ قرشی تیمی بکری حنبلی مورخ و محدث۔ اصل نام عبد الرحمٰن ہے ـ‘ لقب جمال الدین‘ کنیت ابو الفرج اور ابن الجوزی کے نام سے مشہور ہیں۔ سلسلہ نسب یہ ہے : عبد الرحمٰن بن ابی الحسن علی بن محمد بن علی بن عبید اﷲ بن عبد اﷲ بن حمادیٰ بن احمد بن محمد بن جعفر الجوزی بن عبد اﷲ بن القاسم بن النضربن القاسم بن محمد بن عبد اﷲ بن عبد الرحمٰن بن القاسم بن محمد بن ابی بکر الصدیق‘ القرشی التیمی البکری البغدادی الحنبلیاور شیخ عبد الصمد بن ابی الجیش کہتے ہیں کہ یہ بصرہ کے ایک محلہ کی طرف نسبت ہے جس کا نام محلۃ الجوز ہے۔ بعض کا قول ہے کہ یہ نہیں بلکہ شہر واسط میں ان کے اجداد کے گھر میں جوز یعنی اخروٹ کا ایک درخت تھا‘ جس کے سوا وہاں اور کوئی اس کا درخت نہیں تھا۔

1920ء کارل ایمیل میکس میلین ویبر ایک جرمن فلسفی، ماہر معاشیات اور جدید معاشریات کے بانیوں میں سے ہے اس کے خیالات اور نظریات نے جدید علم معاشرت پر گہرا اثر ڈالا ہے۔ عموما میکس ویبر کا نام امیل درکائیم اور کارل مارکس کے ساتھ جدید علم معاشرت کے تین بانیوں میں سے ایک کی حیثیت سے لیا جاتا ہے۔ وہ 21 اپریل 1864ء کو پیدا ہوا۔

1946ء جان بیئر، ٹیلی وژن کا موجد۔ اسکاٹ لینڈ میں پیداہوا۔ پہلی جنگ عظیم کے اختتام تک ایک بجلی کی کمپنی کا مہتمم رہا۔ 1929ء میں ٹیلے وژن ایجاد کیا۔ تاریک نظری بھی ایجاد کی جس سے رات کے اندھیرے میں بھی فوٹو گرافی کی جاسکتی ہے۔ وہ 13 اگست 1888 کو پیدا ہوا۔

1964ء مولانا صلاح الدین احمد پاکستان سے تعلق رکھنے والے اردو کے نامور ادیب، صحافی، نقاد، مترجم ادبی جریدے ادبی دنیا کے مدیر تھے۔ وہ 25 مارچ، 1902ء کو پیدا ہوئے۔

مولانا صلاح الدین احمد کے بارے میں تفصیلی مضمون پڑھنے کے لیے یہاں کلک کریں۔

2018ء ملا فضل اللہ تحریک نفاذ شریعت محمدی کا سربراہ تھاجو ایک کالعدم پاکستانی اسلامی بنیاد پرست عسکریت پسند گروہ ہے اور تحریک طالبان پاکستان کا اتحادی ہے۔ اسے سوات طالبان کے “سربراہ” کے طور پر بھی جاتا تھا۔ وہ تحریک نفاذ شریعت محمدی کے بانی صوفی محمد کا داماد بھی تھا۔ اسے 7 نومبر 2013ء کو حکیم اللہ محسود کی جگہ تحریک طالبان پاکستان کا سربراہ مقرر کیا گیا جو یکم نومبر 2013 کو ایک امریکی ڈرون حملے میں ہلاک ہو گیا تھا۔ امریکی افواج نے دعویٰ کیا ہے کہ ملا فضل اللہ 14 جون 2018 کے ڈرون حملے میں مارا گیا۔ افغان وزارتِ دفاع نے بھی امریکی ڈرون حملے میں کالعدم تحریک طالبان پاکستان کے سربراہ ملا فضل اللہ کی ہلاکت کی تصدیق کردی ہے

تعطیلات و تہوار

1948ء اسرائیل نے اپنی آزادی کا اعلان کیا

خون عطیہ کرنے کا عالمی دن

Please follow and like us:

Leave a Reply