وزیراعلیٰ پنجاب سے داتا دربار دھماکے میں شہید پولیس اہلکاروں کے لواحقین کی ملاقات

Spread the love

شہید کانسٹیبل شاہد نذیر ،محمد سہیل ،محمد صدام ،محمد کے لواحقین کو1، 1کروڑ روپے کے چیک تقسیم کئے

شہداء ملک و قوم کے ہیرو ہیں، پنجاب پولیس نے ہمیشہ فرنٹ لائن پر آ کر بہادری اور جرت کی تاریخ رقم کی

شہید پولیس اہلکاروں کے اہل خانہ کو گھر بھی دیئے جائینگے ، بچوں کو فری تعلیم دی جائیگی ، عثمان بزدار کی گفتگو

لاہور(صباح نیوز) وزیراعلی پنجاب عثمان بزدار نے داتا دربار حملے میں شہید ہونے والے پولیس اہلکاروں کے اہل خانہ سے ملاقات کی اور ان میں ایک ایک کروڑ روپے کے چیک تقسیم کئے، وزیراعلی پنجاب نے کہا کہ شہید پولیس اہلکاروں کے اہل خانہ کو گھر بھی فراہم کئے جائیں گے۔

وزیراعلی پنجاب عثمان بزدار سے شہید ہیڈ کانسٹیبل شاہد نذیر، شہید ہیڈ کانسٹیبل محمد سہیل، شہید کانسٹیبل محمد صدام حسین اور شہید کانسٹیبل محمد سلیم کے والدین، بیواں اوربچوں نے ملاقات کی۔ اس موقع پر وزیراعلیٰ نے کہا کہ شہید پولیس اہلکاروں کے اہل خانہ کو گھر بھی دیئے جائیں گے اور لواحقین کو شہید اہلکار کی ریٹائرمنٹ کی مدت ملازمت مکمل ہونے تک پوری تنخواہ بھی ملتی رہے گی۔

انہوں نے اعلان کیا کہ شہید اہلکار کی بیوہ، بیٹے یا بیٹی کو سرکاری ملازمت دی جائے گی، شہدا کے اہل خانہ ان کی ریٹائرمنٹ تک سرکاری گھر میں رہ سکیں گے اور شہدا کے بچوں کو فری تعلیم اور صحت کی سہولتیں فراہم کی جائیں گی۔وزیراعلیٰ نے شہید پولیس اہلکاروں کی عظیم قربانی کو خراج عقیدت بھی پیش کیا، اہل خانہ سے تعزیت کرتے ہوئے وزیراعلیٰ نے کہا کہ شہید پولیس اہلکاروں نے اپنی قیمتی جانیں وطن پر قربان کی ہیں۔

شہدا کے اہل خانہ کیلئے جو کچھ ممکن ہو سکا، کریں گے۔ شہید ہمیشہ زندہ رہتے ہیں یہ ملک و قوم کے ہیرو ہیں، پنجاب پولیس نے ہمیشہ فرنٹ لائن پر آ کر بہادری اور جرت کی تاریخ رقم کی ہے،قوم کو بہادرسپوتوں کی عظیم قربانیوں پر فخر ہے۔ جانوں کا نذرانہ دینے والے بہادر سپوتوں کی قربانیاں رنگ لائیں گی۔

Leave a Reply