13 جون کے واقعات ایک نظر میں

Spread the love

واقعات

1956ءبرطانیہ نے باہتر سالہ قبضے کے بعدنہر سوئس مصر کے حوالے کی

1955ءسوویت یونین میں ہیرے کی پہلی کان دریافت ہوئی

1932ءبرطانیہ اور فرانس نے امن معاہدے پر دستخط کیے

1978ءاسرائیلی فوج کا لبنان سے انخلاہوا

ولادت

1899ء سردار عبد الرب نشتر 2 اگست 1949ء تا 24 نومبر 1951ء تک پاکستان کے صوبہ پنجاب کے گورنر رہے۔ آپ 13 جون 1899ء کو پشاور میں پیدا ہوئے اور 14 فروری 1958ء کو کراچی میں فوت ہوئے۔

1908ء محمد عثمان ڈیپلائی پاکستان سے تعلق رکھنے والے سندھی اور اردو زبان کے مشہور و معروف ناول نگار، افسانہ نگار، مترجم، ڈراما نویس اور صحافی تھے جنہوں نے سندھی زبان میں شہرۂ آفاق ناول سانگھڑ تحریر کیا۔ ان کا انتقال 7 فروری 1981ء کو ہوا۔

1911ء لیوس والٹلر الوریزز امریکا کےکے ایک طبیعیات دان تھے جنھیں الیمنٹری پارٹیکل فزکس پر کے گئے انکے کام پر 1968ء میں انھیں نوبل انعام برائے طبیعیات دیا گیا۔

1938ء قمر علی عباسی پاکستان سے تعلق رکھنے والے نامور صحافی، عالمی شہرت یافتہ سفرنامہ نگار اور کالم نگار تھے۔ وہ 31 مئی 2013 کو انتقال کر گئے۔

1944ء بان کی مون جنوبی کورین سیاست دان اور اقوام متحدہ کے آٹھویں جنرل سیکرٹری رہے۔

1928ء کریسٹوفر اے۔ پسارائیڈامریکی ماہر اقتصادیات تھے اقتصا دیات میں ان کی کام کی اہمیت کو دیکھ کر 1994 میں انھیں رینہارڈ سیلٹن اور جون ہارسانئے کو نوبل میموریل انعام برائے معاشیات مشترکہ طور پر دیا گیا۔ ان کا انتقال 23 مئی 2015ء کو ہوا۔

وفات

793ء خواجہ عبد الواحد بن زید نام اور کنیت ابوالفضل تھی عبد الواحد بن زيد جنہیں امام ذھبی نے شیخ العباد کا لقب دیا ابو عبیدہ بصری کے نام سے بھی معروف ہیں ان کا ذکر رواۃ حدیث میں ملتا ہے جنہیں صوفی اور واعظ کی حیثیت سے جانا جاتا ہے انہوں نے حسن بصری،عطاء بن ابی رباح ،عبادة بن نسی ،عبد الله بن راشد ،وكيع ومحمد بن السماك ،زيد بن الحباب ،ابو سُلَيْمَان الدارانی اورمسلم بن ابْرَاهِيم اور کثیر جماعت نے روایت کیں۔

1290ء کیومرث خاندان غلاماں کا آخری بادشاہ تھا۔ وہ معز الدین کیقباد (1286ء تا 1290ء) کا بیٹا تھا اور اپنے والد کی بیماری اور بعد ازاں خلجی سرداروں کی جانب سے قتل کے بعد تخت نشین ہوا۔ تاہم جلال الدین فیروز خلجی نے اسے اقتدار سے ہٹا کر خود تخت حاصل کر لیا۔ اس طرح سلطنت دہلی کے پہلے خاندان کی حکومت کا خاتمہ ہو گیا۔ اس کی پیدائش کا سال 1285 بیان کیا گیا ہے۔

1931ء شارل ایدواغ گیوم، سویٹزرلینڈ کے ایک طبیعیات دان تھے، جنھیں 1920ء میں نوبل انعام برائے طبیعیات دیا گیا جس کی وجہ انکی ایجاددات تھیں جن سے طبیعیات میں پیمائشات کا نظام اور بھی بہتر ہوا۔ وہ 15 فروری 1899 کو پیدا ہوئے۔

1972 جارج وون بیکسی ہنگری کے ایک ماہر حیاتیاتی طبیعیات تھے جنھوں نے ممالیہ جانوروں کی قوت سماعت کے حوالے سے کیے گئے کام کی وجہ سے شہرت پائی۔ انھوں نے 1960 کا نوبل انعام وصول کیا تھا۔ وہ 3 جون 1899 کو پیدا ہوئے۔

1990ء بیگم رعنا لیاقت علی پاکستان کی خاتون اول، پاکستان کے پہلے وزیراعظم لیاقت علی خان کی بیگم، تحریک پاکستان کی رکن اور سندھ کی پہلی خاتون گورنر تھیں۔ وہ 13 فروری 1905 کو پیدا ہوئیں

2003ء ملک معراج خالد پاکستان کے سیاست دان اور عبوری دور میں نگران وزیر اعظم تھے۔

2007ء پروفیسر ڈاکٹر غلام حسین ذو الفقار پاکستان سے تعلق رکھنے والے اردو کے ممتاز محقق، نقاد، مؤرخ، ماہرِ اقبالیات، ماہرِ تعلیم اور جامعہ پنجاب میں شعبۂ اردو کے صدر تھے۔ وہ 15 اگست، 1924ء کو پیدا ہوئے۔

2012ء پاکستان کے عظیم گلوکار،شہنشاہِ غزل مہدی حسن

Please follow and like us:

Leave a Reply