حکومت کی بجٹ میں بڑی کفایت شعاری مہم کی تیاری، 40 ارب روپے بچانے پر غور

Spread the love

وزیراعظم عمران خان کی ہدایات کے تحت کفایت شعاری کی مختلف تجاویز تیار کر لی گئی ہیں

آئندہ بجٹ میں تمام غیر ضروری اخراجات ختم کیے جائیں گے

سرکاری افسران کی تنخواہیں منجمند بیورو کریسی کی تنخواہیں بھی نہ بڑھانے پر غور

تمام وزارتوں میں غیر ضروری اخراجات ختم کرنے اور وزارتوں میں نئی گاڑیاں اور ایئرکنڈیشنز خریدنے پر پابندی لگانے کی تجویز دی گئی

وزارتوں اور محکموں میں تزین وآرائش کا فنڈ ختم کرنے، وزارتوں اور محکموں میں تحفے تحائف اور انٹرٹینمنٹ الاونس ختم کرنے کی تجویز بھی دی گئی

کفایت شعاری مہم کی ابتدائی منظوری منگل کو کابینہ اجلاس میں دی جائے گی تاہم حتمی فیصلہ پارلیمنٹ بجٹ سیشن میں کرے گی

اسلام آباد(صباح نیوز)حکومت نے آئندہ بجٹ میں تاریخ کی سب سے بڑی کفایت شعاری مہم کی تیاری مکمل کر لی ہے۔ وزیراعظم عمران خان کی ہدایات کے تحت کفایت شعاری کی مختلف تجاویز تیار کر لی گئی ہیں۔ کفایت شعاری مہم کے ذریعے 40 ارب روپے بچانے پر غور کیا جا رہا۔

ذرائع نے بتایا کفایت شعاری مہم کے تحت سرکاری افسران کی تنخواہیں منجمند کرنے جبکہ دفاعی افسران کی طرح بیورو کریسی کی تنخواہیں بھی نہ بڑھانے پر غور کیا جا رہا ہے۔ اس کے علاوہ سرکاری افسران کی تنخواہیں نہ بڑھانے، ایوان صدر اور ایوان وزیراعظم اور گورنر ہاسز میں سادگی مہم، صدر اور وزیراعظم کے لیے تنخواہوں میں اضافہ نہ کرنے اور گورنرز اور اراکین کابینہ کی تنخواہوں میں اضافہ نہ کرنے پر تجویز کیا جا رہا ہے۔

تنخواہوں میں اضافہ صرف گریڈ ایک سے 16 کے ملازمین پر ہو سکتا ہے۔ ذرائع کے مطابق آئندہ بجٹ میں تمام غیر ضروری اخراجات ختم کیے جائیں گے۔ تمام وزارتوں میں غیر ضروری اخراجات ختم کرنے اور وزارتوں میں نئی گاڑیاں اور ایئرکنڈیشنز خریدنے پر پابندی لگانے کی تجویز دی گئی ہے۔

وزارتوں اور محکموں میں تزین وآرائش کا فنڈ ختم کرنے، وزارتوں اور محکموں میں تحفے تحائف اور انٹرٹینمنٹ الانس ختم کرنے کی تجویز بھی دی گئی ہے۔کفایت شعاری مہم کی ابتدائی منظوری منگل کو کابینہ اجلاس میں دی جائے گی تاہم حتمی فیصلہ پارلیمنٹ بجٹ سیشن میں کرے گی۔

Please follow and like us:

Leave a Reply